بائیوببل کے دور میں ذہنی طور پر خود کی دیکھ بھال کی ضرورت : کوہلی

ویراٹ نے ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کے بعد نیوزی لینڈ کے خلاف کھیلی جانے والی ٹی ٹوئنٹی سیریز اور 2 ٹسٹ میاچس کی سیریز میں پہلے ٹسٹ میں آرام کرنے کا فیصلہ کیاتھا۔

ممبئی: ایک ماہ کے وقفہ کے بعد ہندوستانی ٹیم میں واپسی کرنے والے کپتان ویراٹ کوہلی نے کہاہے کہ کرکٹ کے بائیو ببل دور میں ذہنی طورپر خود کی دیکھ بھال کرنے کی ضرورت ہے۔

ویراٹ نے ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کے بعد نیوزی لینڈ کے خلاف کھیلی جانے والی ٹی ٹوئنٹی سیریز اور 2 ٹسٹ میاچس کی سیریز میں پہلے ٹسٹ میں آرام کرنے کا فیصلہ کیاتھا۔

اس دوران انہوں نے اپنی بیٹنگ تکنیک اور کھیل سے متعلق دیگر پہلوؤں پر کافی کام کیا۔ جب کانپور میں ہندوستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان ٹسٹ میچ چل رہا تھا، تب ویراٹ ممبئی میں سابق بلے بازی کوچ سنجے بانگر کے ساتھ اپنی بیٹنگ پر کام کررہے تھے۔ وہ بالکل تازہ دم ہوکر واپس آئے ہیں۔

کرکٹ کے بائیو ببل دور میں انہوں نے ذہنی طورپر اپنے آپ کا خیال رکھنے کی ضرورت پر زور دیا۔ ویراٹ نے کہاکہ یہ سمجھنا بہت ضروری ہے کہ خود کو ذہنی طورپر تازہ رکھنا اہم ہے۔ کپتان نے مزید کہاکہ کووڈ دور میں جب سے کرکٹ میں بائیو ببل لازمی ہوا ہے.

اس وقت سے بہت سے کھلاڑیوں نے اس بارے میں بات کی ہے کہ بائیو ببل میں رہ کر کرکٹ کھیلنا کتنا مشکل ہے۔ اس دوران ہمارے کھلاڑیوں اور انتظامیہ کے درمیان ایک بہتر ہم آہنگی پروان چڑھی ہے۔ ہم نے ایک دوسرے کے ساتھ ورک لوڈ کو کیسے مینج کرناہے اور ذہنی صحت پر کافی بات چیت کی ہے۔

کوہلی نے مزید کہاکہ ایک ایسی جگہ پر پریکٹس کرنا جہاں آپ ایک محدود ماحول میں نہیں ہیں یا 50 کیمرے آپ کے آس پاس نہ ہوں ایسا ہم پہلے کرسکتے تھے۔ ایسے حالات میں ہم ایسا وقت نکالنے کے قابل ہوتے تھے، جہاں آپ اپنے گیم پر اکیلے کام کرسکتے تھے۔ ویراٹ کوہلی نے مزید کہاکہ ہم کچھ وقت کیلئے آف لے سکتے ہیں، تاکہ ہم اپنے آپ کے بارے میں سوچ سکیں یا خود کو وقت دے سکیں۔ ان سب چیزوں سے کافی فرق پڑتاہے۔

ذریعہ
یو این آئی

تبصرہ کریں

Back to top button