بل اور بلڈوزر کی حکومت کو ہٹانے کیلئے ایس پی کا اقتدار ضروری: اکھلیش یادو

بل اور بلڈوزر کی حکومت کو ہٹانے کیلئے ایس پی کا اقتدار ضروری: اکھلیش یادو پرتاپ گڑھ: سماج وادی پارٹی کے سربراہ و سابق چیف منسٹر اکھلیش یادو نے کہا کہ بل و بلڈوزری حکومت کو ہٹانے کے لیئے سماج وادی پارٹی کا اقتدار میں آنا ضروری ہے۔ انہوں نے تحصیل پٹی کے رام کولا گاوں میں اتوار کے روز شادی کی تقریب میں کارکنوں کو خطاب کرتے ہوئے مذکورہ تاثرات کا اظہار کیا۔ سابق چیف منسٹر اکھلیش یادو نے کہا کہ پرتاپ گڑھ میں کارکنوں کا بہت استحصال اور فرضی سنگین دفعات کے مقدمات میں پھنسا کر پریشان کیا جا رہا ہے۔ کارکنوں کو انتباہ کرتے ہوئے کہا کہ بھولنا نہیں ناانصافی کرنے والوں کی نشاندہی کرکے رکھنا یہاں جرائم کے اضافے کے متعلق سے اکھلیش یادو نے کہا کہ کچھ روز قبل پرتاپ گڑھ کا تاجر خاندان سکیورٹی کے لیئے چیف منسٹر سے مدد مانگنے گیا تھا،اس کو مدد تو نہیں ملی بلکہ اس تاجر کے دونوں بھائیوں کو گولیوں سے بھون دیا گیا۔ پریاگ راج ضلع میں ہوئے چار لوگوں کے بہیمانہ قتل پر حکومت کو قصوروار ٹھراتے ہوئے کہا کہ اگر انتظامیہ نے سمجھدارای سے کام لیا ہوتا تو چار لوگوں کا قتل نہ ہوتا۔انہوں نے کہا کہ گوداموں سے کھاد غائب ہے، دھان کی خرید نہیں ہو رہی ہے، نوجوان روزگار سے محروم ہیں، ایسے میں عوام تبدیلی چاہتی ہے۔ سابق چیف منسٹر نے کہا کہ شہروں اور ہمارے منصوبہ کا نام بدلنے والوں کو اب عوام تبدیل کرنے کیلئے پوری طرح تیار ہے۔ کسانوں پر جیپ چڑھا کر قتل کرنے والے لوگ کبھی بھی کسانوں کے ہمدرد نہیں ہو سکتے۔ چیف منسٹر بابا نہ تو لیپ ٹاپ چلانا جانتے ہیں اور نہ ہی اسمارٹ فون، یہ جھوٹے لوگوں کی حکومت ہے۔ دھوکہ دے کر عوام کو بے وقوف بناتی ہے۔انہوں نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کے زیر اقتدار آنے کے بعد نوجوانوں کو روزگار کا موقع فراہم کیا جائے گا۔اس موقع پر سماج وادی پارٹی کے کثیر تعداد میں لیڈران موجود رہے۔

پرتاپ گڑھ: سماج وادی پارٹی کے سربراہ و سابق چیف منسٹر اکھلیش یادو نے کہا کہ بل و بلڈوزری حکومت کو ہٹانے کے لیئے سماج وادی پارٹی کا اقتدار میں آنا ضروری ہے۔ انہوں نے تحصیل پٹی کے رام کولا گاوں میں اتوار کے روز شادی کی تقریب میں کارکنوں کو خطاب کرتے ہوئے مذکورہ تاثرات کا اظہار کیا۔

سابق چیف منسٹر اکھلیش یادو نے کہا کہ پرتاپ گڑھ میں کارکنوں کا بہت استحصال اور فرضی سنگین دفعات کے مقدمات میں پھنسا کر پریشان کیا جا رہا ہے۔ کارکنوں کو انتباہ کرتے ہوئے کہا کہ بھولنا نہیں ناانصافی کرنے والوں کی نشاندہی کرکے رکھنا یہاں جرائم کے اضافے کے متعلق سے اکھلیش یادو نے کہا کہ کچھ روز قبل پرتاپ گڑھ کا تاجر خاندان سکیورٹی کے لیئے چیف منسٹر سے مدد مانگنے گیا تھا،اس کو مدد تو نہیں ملی بلکہ اس تاجر کے دونوں بھائیوں کو گولیوں سے بھون دیا گیا۔ پریاگ راج ضلع میں ہوئے چار لوگوں کے بہیمانہ قتل پر حکومت کو قصوروار ٹھراتے ہوئے کہا کہ اگر انتظامیہ نے سمجھدارای سے کام لیا ہوتا تو چار لوگوں کا قتل نہ ہوتا۔انہوں نے کہا کہ گوداموں سے کھاد غائب ہے، دھان کی خرید نہیں ہو رہی ہے، نوجوان روزگار سے محروم ہیں، ایسے میں عوام تبدیلی چاہتی ہے۔

سابق چیف منسٹر نے کہا کہ شہروں اور ہمارے منصوبہ کا نام بدلنے والوں کو اب عوام تبدیل کرنے کیلئے پوری طرح تیار ہے۔ کسانوں پر جیپ چڑھا کر قتل کرنے والے لوگ کبھی بھی کسانوں کے ہمدرد نہیں ہو سکتے۔ چیف منسٹر بابا نہ تو لیپ ٹاپ چلانا جانتے ہیں اور نہ ہی اسمارٹ فون، یہ جھوٹے لوگوں کی حکومت ہے۔ دھوکہ دے کر عوام کو بے وقوف بناتی ہے۔انہوں نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کے زیر اقتدار آنے کے بعد نوجوانوں کو روزگار کا موقع فراہم کیا جائے گا۔اس موقع پر سماج وادی پارٹی کے کثیر تعداد میں لیڈران موجود رہے۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button