بہار اسمبلی میں چیف منسٹر اور اسپیکر کے درمیان بحث

اسپیکر پر قواعد کی خلاف ورزی کرنے نتیش کمار کاالزام ۔ دستور کے مطالعہ کا مشورہ

پٹنہ ۔ بہار اسمبلی میں آج اس وقت ایک عجیب صورتِ حال پیدا ہوگئی جب چیف منسٹر نتیش کمار اور اسپیکر وجئے کمار سنہا کے درمیان اس بات پر گرما گرم بحث ہوئی کہ آیا حکومت کی جانب سے زیرتفتیش معاملہ جسے مراعات کمیٹی سے بھی رجوع کیا گیا ہو ، کیا اسے ایوان میں بار بار اٹھایا جاسکتا ہے ؟

جب اسپیکر نے کابینی وزیر بجیندر یادو کو اس معاملہ کی وضاحت کرنے کے لیے کہا تو چیف منسٹر اپنی برہمی کا اظہار کرنے اٹھ کھڑے ہوئے ۔ یہ معاملہ لکھی سرائے سے متعلق ہے ، جو سنہا کا اسمبلی حلقہ بھی ہے ۔

کمار نے کہا کہ ریاستی وزیر کو حکومت کی جانب سے جواب دینے کی اجازت دی گئی ہے ۔ جب انہوں نے یہ بتا دیا ہے کہ تحقیقات جاری ہیں تو آپ ان سے یہ کہہ رہے ہیں کہ ایک دن بعد اپنا تازہ جواب دیں ۔ یہ بات قاعدہ کے خلاف ہے ، براہِ مہربانی دستور کا مطالعہ کریں ۔

انہوں نے کہا کہ ایسے معاملات میں حکومت اور پولیس کارروائی کرسکتی ہے ۔ تحقیقاتی رپورٹ عدالت کے سامنے پیش کرنا ہوگا ۔ کیا یہ ایوان اس معاملہ میں مداخلت کرنے کا مجاز ہے ؟ میں بحیثیت چیف منسٹر چوتھی میعاد گزار رہا ہوں ۔ میں کبھی اسمبلی کا بھی رکن تھا ۔ میں نے کبھی ایسی بے قاعدگی نہیں دیکھی ۔ براہِ مہربانی ایوان کو اس اندازمیں نہ چلائیں ۔

تبصرہ کریں

Back to top button