بیجنگ میں عمران خان کی چینی صدر شی جنپنگ سے ملاقات

اطلاعات کے مطابق چین نئے دور میں ایک ساتھ چین- پاکستان کمیونٹی کے درمیان رابطے بڑھانے، دونوں ممالک کے عوام کو فائدہ پہنچانے، علاقائی تعاون کو فروغ دینے اور عالمی امن میں کردار ادا کرنے کے لیے پاکستان کے ساتھ کام کرنے کو تیار ہے۔

بیجنگ: وزیر اعظم عمران خان نے آج چین کے صدر شی جن پنگ سے ملاقات کی جس میں دونوں قائدین نے خطہ کے امن، استحکام اور ترقی کے لیے مشترکہ کوششیں جاری رکھنے پر اتفاق کیا اور افغانستان میں انسانی بحران سے نمٹنے کے لیے عالمی برادری پر فوری اقدامات پر زور دیا ہے۔

وزیراعظم آفس کے میڈیا ونگ سے جاری بیان کے مطابق اتوار کو وزیراعظم عمران خان نے چین کے صدر شی جن پنگ سے بیجنگ میں عظیم عوامی ہال میں ملاقات کی جس کے ساتھ ہی ان کا چار روزہ دورہ چین اختتام کو پہنچا۔

دونوں قائدین نے عوام سے عوام کے درمیان رابطے بڑھانے کے معاملے پر تبادلہ خیال کیا۔

اطلاعات کے مطابق چین نئے دور میں ایک ساتھ چین- پاکستان کمیونٹی کے درمیان رابطے بڑھانے، دونوں ممالک کے عوام کو فائدہ پہنچانے، علاقائی تعاون کو فروغ دینے اور عالمی امن میں کردار ادا کرنے کے لیے پاکستان کے ساتھ کام کرنے کو تیار ہے۔

علحدہ موصولہ اطلاع کے بموجب پاکستان کے وزیرِاعظم عمران خان اپنے چین کے چار روزہ دورے کے اختتام پر اتوار کو چین کے صدر شی جن پنگ سے ملاقات کے بعد وطن روانہ ہو گئے ہیں۔

دونوں رہنماؤں کی ملاقات کے بعد پاکستانی دفترِ خارجہ کی جانب سے اعلامیہ جاری کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ پاکستان اور چین کی شراکت داری خطے میں امن و استحکام کے لیے اہم ہے۔

دونوں رہنماؤں نے پاکستان اور چین کے درمیان جاری تعاون سمیت خطے کی مجموعی صورتِ حال پر تبادلہ خیال کیا۔گرینڈ ہال آف پیپل میں ہونے والی اس ملاقات میں عمران خان نے ونٹر اولمپکس کے انعقاد پر چینی صدر کو مبارکباد دی۔

عمران خان نے کہا کہ چین پاکستان کا ثابت قدم دوست، کٹر حامی اور آئرن برادر ہے جس نے ہر مشکل میں پاکستان کا ساتھ دیا ہے۔ دونوں ملکوں کی دوستی ہر آزمائش پر بھی پوری اْتری ہے۔وزیرِ اعظم عمران خان نے چین، پاکستان اقتصادی راہداری (سی پیک) میں چین کی سرمایہ کاری کا خیر مقدم بھی کیا۔

وزیر اعظم عمران خان نے بھارت کے زیرِ انتظام کشمیر میں بھارتی اقدامات اور اْن کے بقول انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر بھی تشویش کا اظہار کیا۔اعلامیے کے مطابق دونوں رہنماؤں نے اتفاق کیا کہ خوشحال اور پرامن افغانستان خطے میں امن و سلامتی کا ضامن ہے۔

ملاقات کے دوران پاکستانی وزیرِ اعظم نے چینی صدر کو دورہ پاکستان کی بھی دعوت دی۔قبل ازیں ہفتے کو پاکستان کے وزیرِ اعظم عمران خان نے چینی ہم منصب لی کی چیانگ سے ملاقات میں باہمی تعلقات کے تمام پہلوؤں بشمول اقتصادی و تجارتی تعاون اور سی پیک منصوبوں میں پیش رفت اور علاقائی اور عالمی معاملات پر گفتگو کی تھی۔

ذریعہ
یو این آئی ؍ منصف ویب ڈیسک

تبصرہ کریں

Back to top button