جنگ زدہ یوکرین سے 688ہندوستانیوں کی واپسی

آپریشن گنگا کے تحت ہفتہ کے دن سے جملہ 907 ہندوستانی شہری واپس لائے گئے۔ ایرانڈیا کے ترجمان نے بتایا کہ مزید 2 پروازیں چلانے کا منصوبہ ہے۔ آج صبح جیوتر آدتیہ سندھیا نے دہلی ایرپورٹ پر پرواز AI1942 سے آنے والے ہندوستانیوں کا خیرمقدم کیا۔

نئی دہلی: جنگ زدہ یوکرین سے اتوار کے دن 688 ہندوستانی شہری ایرانڈیا کی 3 پروازوں سے نئی دہلی واپس ہوئے۔ انہیں رومانیہ کے دارالحکومت بخارسٹ اور ہنگری کے دارالحکومت بڈاپسٹ سے لایا گیا۔ وزیر شہری ہوابازی جیوتر آدتیہ سندھیا نے کہا کہ فی الحال یوکرین میں تقریباً 13 ہزار ہندوستانی پھنسے ہوئے ہیں اور حکومت انہیں جتنا جلد ممکن ہو واپس لانے کی کوشش کررہی ہے۔

 آپریشن گنگا کے تحت ہفتہ کے دن سے جملہ 907 ہندوستانی شہری واپس لائے گئے۔ ایرانڈیا کے ترجمان نے بتایا کہ مزید 2 پروازیں چلانے کا منصوبہ ہے۔ آج صبح جیوتر آدتیہ سندھیا نے دہلی ایرپورٹ پر پرواز AI1942 سے آنے والے ہندوستانیوں کا خیرمقدم کیا۔ انہوں نے ایرپورٹ ٹرمنل میں میڈیا کو بتایا کہ تقریباً 13ہزار ہندوستانی‘ یوکرین میں ابھی بھی پھنسے ہوئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ وہاں کی صورتِ حال نازک ہے۔ سندھیا نے یوکرین سے آنے والے طلبا سے کہا کہ میں جانتا ہوں کہ آپ لوگ انتہائی مشکل حالات سے گزرے ہیں۔ حکومت ہند اور ملک کے 130 کروڑ عوام آپ کے ساتھ کھڑے ہیں۔ یوکرین‘ رومانیہ اور یوکرین‘ ہنگری سرحدوں پر پہنچنے والے ہندوستانیوں کو سڑک کے راستہ بخارسٹ اور بڈاپسٹ لے جایا گیا تھا۔ ایرانڈیا نے سندھیا کی تصویر شیئر کی۔

 یوکرین کے مغربی حصے نسبتاً جنگ سے محفوظ ہیں۔ وہاں ریل گاڑیاں چل رہی ہیں۔ وہاں کی ریلویز ہندوستانیوں کے لئے خصوصی گاڑیاں چلارہی ہے۔ ملک کی قومی ایرلائن ایرانڈیا یوکرین سے لائے جانے والے ہندوستانیوں سے کرایہ نہیں لے رہی ہے۔ یوکرین کے ہندوستانی سفارت خانہ نے اتوار کے دن کہا کہ جہاں بھی کرفیو اٹھالیا گیا ہو ہندوستانی شہریوں کو مشورہ دیا جاتا ہے کہ وہ قریبی ریلوے اسٹیشن پہنچ جائیں اور ملک کے مغربی حصوں کی طرف سفر شروع کردیں۔

ترواننتاپورم سے آئی اے این ایس کے بموجب جنگ زدہ ملک یوکرین سے 11 طلبا کا پہلا گروپ بحفاظت کوچی ایرپورٹ پہنچا جہاں ماں باپ‘ دوستوں اور حکومت کیرالا کے عہدیداروں نے اس کا خیرمقدم کیا۔ یوکرین سے 4 طلبا کوہیکوڈ ایرپورٹ پہنچے۔

حکومت کیرالا کے ذرائع کے بموجب کیرالا کے 83طلبا نئی دہلی اور ممبئی پہنچے ہیں۔ یوکرین میں ایم بی بی ایس سال دوم اور سال سوم میں زیرتعلیم 2طلبا نے ہندوستانی سفارت خانہ کا شکریہ ادا کیا اور توقع کی کہ یوکرین میں پھنسے تمام طلبا جلد از جلد وطن لائے جائیں گے۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button