جہانگیرپوری تشدد، حکومت کی یکطرفہ کاروائی:اسد اویسی

انہوں نے سوال کیاکہ اشتعال انگیزنعرہ کیوں لگائے گئے۔ ایم پی نے دعویٰ کیاکہ جلوس اجازت کے بغیر نکالاگیاتھا اورکہاکہ جہاں حکومت چاہتی ہے وہیں تشدد ہوتاہے۔

حیدرآباد: اے آئی ایم آئی ایم صدر اسدالدین اویسی نے آج الزام عائد کیاکہ جہانگیرپوری تشدد کیس میں یکطرفہ کاروائی کی جارہی ہے۔

انہوں نے یہاں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے یہ بھی الزام عائد کیاکہ16۔ اپریل کودہلی کے جہانگیر پوری علاقہ میں مذہبی جلوس کے دوران لوگوں کے پاس ہتھیارتھے۔

اویسی نے کہاکہ پہلے دوجلوس نکالے گئے اورجب تیسرا جلوس اس محلہ سے گزرا اسی وقت تشدد کیوں ہوا۔ میں اس واقعہ کی مذمت کرتاہوں۔

انہوں نے سوال کیاکہ اشتعال انگیزنعرہ کیوں لگائے گئے۔ ایم پی نے دعویٰ کیاکہ جلوس اجازت کے بغیر نکالاگیاتھا اورکہاکہ جہاں حکومت چاہتی ہے وہیں تشدد ہوتاہے۔

انہوں نے کہاکہ ہم تشدد کی مذمت کرتے ہیں۔ تشدد کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔ قانونی طریقہ کارپر عمل کیاجاناچاہئے لیکن ایسا معلوم ہوتاہے کہ مرکزیکطرفہ کاروائی کررہاہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button