کشمیر میں خاموشی کو امن سمجھنا غلط : محبوبہ مفتی

انہوں نے سری نگر میں میڈیا نمائندوں سے بات چیت میں کہا کہ جموں و کشمیر کے عوام کو دبایا گیا ہے۔ جبری خاموشی کو امن سمجھنا ٹھیک نہیں۔

سری نگر: سابق چیف منسٹر اور صدر پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی(پی ڈی پی)محبوبہ مفتی نے پیر کے دن کہا کہ کشمیر میں خاموشی کو امن کی علامت سمجھنا غلط ہے۔

انہوں نے سری نگر میں میڈیا نمائندوں سے بات چیت میں کہا کہ جموں و کشمیر کے عوام کو دبایا گیا ہے۔ جبری خاموشی کو امن سمجھنا ٹھیک نہیں۔

انہوں نے کہا کہ جموں وکشمیر کو زائد فورسس بھیجنا واضح اشارہ ہے کہ صورتِ حال اچھی نہیں ہے۔ حالیہ شہری ہلاکتیں‘ انتظامیہ کی مکمل ناکامی ہیں جو ایسے واقعات کی روک تھام نہ کرسکی۔ محبوبہ مفتی نے کہا کہ پرائم منسٹر کیر فنڈ کے ذریعہ جو وینٹیلیٹرس لائے گئے تھے وہ نہ صرف سری نگر بلکہ گجرات میں بھی ناکارہ پڑے ہیں۔

پرائم منسٹر کیر فنڈ میں بھاری رقومات منتقل کی گئیں اور کوئی بھی عوام کو جواب دہ نہیں۔ اس فنڈ کے ذریعہ ناکارہ وینٹیلیٹرس کا لایا جانا واضح اشارہ ہے کہ یہ بہت بڑا اسکام ہے۔

کرپشن سے پاک حکومت کے بلندبانگ دعوے کئے گئے لیکن موجودہ حکومت میں کرپشن اپنے عروج پر ہے اور یہ سلیقہ سے جاری ہے۔ بی جے پی جو بیانات دیتی ہے وہ حقائق پر مبنی نہیں ہوتے۔ یہ صرف جملہ بازی ہوتے ہیں‘ اس سے زیادہ کچھ نہیں۔ ان بیانات میں کوئی وزن نہیں ہوتا۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.