امریکہ کو ہندوستانی فضائی اڈے دینا خطرہ سے خالی نہیں: تیواری

تیواری نے ایک بیان میں پوچھا کہ کیا یہ صحیح ہے کہ امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے ہندوستان سے رجوع کیا ہے کہ امریکہ کو شمال مغربی سرحدوں پر افغانستان کے خلاف فضائی اڈے استعمال کرنے دیا جائے۔

نئی دہلی: کانگریس رکن پارلیمنٹ منیش تیواری نے ان خبروں کے بعد چہارشنبہ کے دن حکومت سے وضاحت طلب کی کہ امریکہ‘ شمال مغربی سرحدوں پر فضائی اڈوں کے لئے استعمال کی اجازت لینے ہندوستان سے رجوع ہوا ہے۔

تیواری نے ایک بیان میں پوچھا کہ کیا یہ صحیح ہے کہ امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے ہندوستان سے رجوع کیا ہے کہ امریکہ کو شمال مغربی سرحدوں پر افغانستان کے خلاف فضائی اڈے استعمال کرنے دیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کے دفتر (پی ایم او) کو جلد وضاحت کرنی چاہئے کیونکہ جس ملک نے بھی امریکہ کو اپنی سرزمین فوجی آپریشنس کے لئے استعمال کرنے دی‘ تباہی کے سوا کچھ ہاتھ نہ آیا۔

گزشتہ 70 برس میں کسی بھی بیرونی طاقت کو ہندوستان میں قدم جمانے نہیں دیا گیا۔ اس سے ہندوستان کے اقتدارِ اعلیٰ کی سنگین خلاف ورزی ہوگی۔

 اوکیناوا‘ فلپائن‘ کوریا‘ ویتنام‘ لاؤس‘ کمپوچیا‘ عراق‘ افغانستان‘ لاطینی اور جنوبی امریکہ میں تاریخ شاہد ہے کہ صرف تباہی آئی۔

منیش تیواری اس خبر پر تبصرہ کررہے تھے کہ امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے سینیٹ کمیٹی برائے امور ِ خارجہ (مسئلہ افغانستان) سے کہا کہ امریکہ‘ ہندوستان سے ربط میں ہے تاکہ افغانستان پر فضائی حملہ کے لئے اس کا ایک اڈہ استعمال کیا جائے۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

یہ بھی دیکھیں
بند کریں
Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.