اکھلیش یادو متھرا اور کاشی کے نام سے بیزار:ڈپٹی چیف منسٹر یوپی

موریہ نے جو آنے والے اسمبلی انتخابات کے امیدواروں کے انتخاب کے لیے ایک میٹنگ میں شریک ہونے بی جے پی کے ہیڈ کوارٹر پہنچے تھے، میڈیا کے نمائندوں کو بتایا کہ اکھلیش کے تبصرہ سے لاکھوں افراد کے عقیدہ کی توہین ہوئی ہے۔

نئی دہلی: سماج وادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو پر تنقید کرتے ہوئے اترپردیش کے ڈپٹی چیف منسٹر کیشو پرساد موریہ نے آج کہا کہ اکھلیش یادو ایودھیا، متھرا اور کاشی سے جھنجھلاتے ہیں۔ انہوں نے یادو سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے ریمارک ”مذہب ایک واہمہ ہے“پر معافی مانگیں۔

موریہ نے اکھلیش کو ان کے ریمارک پر نشانہ تنقید بناتے ہوئے کہاکہ سماج وادی پارٹی سربراہ اور یوپی کے سابق چیف منسٹر اکھلیش یادو رادھے رادھے، بھگوان بانکے بہاری، ایودھیا، متھرا اور کاشی کے نام سے جھنجھلا اٹھتے ہیں۔

 موریہ نے جو آنے والے اسمبلی انتخابات کے امیدواروں کے انتخاب کے لیے ایک میٹنگ میں شریک ہونے بی جے پی کے ہیڈ کوارٹر پہنچے تھے، میڈیا کے نمائندوں کو بتایا کہ اکھلیش کے تبصرہ سے لاکھوں افراد کے عقیدہ کی توہین ہوئی ہے۔ انہیں معافی مانگنی چاہیے اور اپنا تبصرہ واپس لے لینا چاہیے۔

 اکھلیش یادو نے گذشتہ ہفتہ دعویٰ کیا تھا کہ بھگوان کرشنا ہر روز ان کے خواب میں آتے ہیں اور انہیں اترپردیش میں رام راجیہ قائم کرنے کی تلقین کرتے ہیں۔ کانگریس قائد عمران مسعود کے سماج وادی پارٹی میں شامل ہونے پر تبصرہ کرتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر نے کہا کہ ہم یہ کہتے رہے ہیں کہ یہ کوئی نئی نہیں بلکہ پرانی سماج وادی پارٹی ہی ہے۔

عمران مسعود کو جنہوں نے مبینہ طور پر وزیر اعظم نریندر مودی کے ٹکڑے ٹکڑے کردینے کی دھمکی دی تھی، ایس پی میں شامل کرنے پر سخت تنقید کرتے ہوئے موریہ نے کہا کہ غنڈے، مجرم اور مافیا سماج وادی پارٹی میں پناہ حاصل کر رہے ہیں۔ موریہ نے دعویٰ کیا کہ پارٹی اسمبلی انتخابات میں 300 سے زیادہ نشستیں حاصل کرے گی اور ایسے لوگوں کو منہ توڑ جواب دے گی۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.