اہم اصلاحات سے حج کو بے حد آسان بنایا گیا:مختار عباس نقوی

نقوی کہاکہ عازمین ِحج کے اِنتخاب کا عمل کورونا ویکسین کی دونوں خوراک لئے جانے اور ہندوستان اور حکومت ِ سعودی عرب کے ذریعہ حج 2022 کے اوقات کے تعیّن کئے جانے والے کورونا پروٹوکول‘ ہدایات اور رہنما اصولوں کو دھیان میں رکھ کر تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

ممبئی: مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور اور ڈپٹی لیڈر راجیہ سبھا مختار عبّاس نقوی نے کہا کہ گذشتہ 7 برسوں میں ہندوستان سے سفرِ حج کے انتظامات میں اہم اصلاحات اور سہولتوں کی فراہمی سے حج کے عمل کو بے حد آسان بنایا گیاہے۔

انہوں نے یہ بات آج یہاں حج 2022 کی تیّاریوں سے متعلق حج کمیٹی آف اِنڈیا کے اعلیٰ عہدیداران کے ساتھ میٹنگ کے دوران کہی۔

انہوں نے کہا کہ حج سبسیڈی ختم کرنے‘ بغیرمحرم (مرد رشتہ دار) کے مسلم خواتین کے سفرِ حج پر عائد پابندی کو ختم کرنے، تمام حج کے عمل کو صد فیصد ڈیجیٹل کرنے وغیرہ جیسی اصلاحات سے ”اِیز آف ڈوئنگ حج“ کو قوت ِ محرکہ عطا ہوئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ حج کمیٹی آف اِنڈیا کا پورٹل‘ حج گروپ آرگنائزرس کا پورٹل‘ ڈیجیٹل ہیلتھ کارڈ‘ اِی۔ مسیحا‘ صحت کے ضمن میں سہولیات‘ مکّہ۔مدینہ میں قیام کے لئے بلڈنگ / ٹرانسپورٹیشن کی معلومات ہندوستان میں ہی فراہم کرنے والی اِی۔لگیج ٹیگنگ کی سہولیات‘ اِی۔ویزا‘ جدید سہولیات سے لیس‘حج موبائل ایپ وغیرہ سے ہندوستانی عازمین ِ حج کی سہولیات‘ تحفظ‘ آسانیوں کی فراہمی کو یقینی بنایاگیا ہے اور بھارت میں حج2022کا پورا عمل صد فیصد آن۔ لائن / ڈیجیٹل ہو گا۔

اِنڈونیشیا کے بعد زیادہ تر عازمین ِ حج ہندوستان سے روانہ ہوتے ہیں۔ نقوی کہاکہ عازمین ِحج کے اِنتخاب کا عمل کورونا ویکسین کی دونوں خوراک لئے جانے اور ہندوستان اور حکومت ِ سعودی عرب کے ذریعہ حج 2022 کے اوقات کے تعیّن کئے جانے والے کورونا پروٹوکول‘ ہدایات اور رہنما اصولوں کو دھیان میں رکھ کر تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حج 2022 کے لئے آن لائن درخواست دینے کے عمل کا آغاز یکم نومبر سے ہو چکا ہے اور آخری تاریخ 31 جنوری 2022 رکھی گئی ہے۔ حج کے لئے درخواست آن لائن اور حج موبائل ایپ کے ذریعہ کئے جا رہے ہیں۔ اِس کی ٹیگ لائن حج ایپ اِن یور ہینڈ Haj App In Your Hand ہے۔

 اِس میں حج کی درخواست‘ درخواست فارم بھرنے کی مکمل معلومات‘ درخواست فارم بھرنے کے عمل کا ویڈیو وغیرہ موجود ہے۔ انہوں نے کہاکہ ابھی تک 20 ہزار سے زیادہ عازمین ِ کرام نے حج 2022 کے لئے درخواست دی ہے جس میں 100 سے زیادہ خواتین نے بغیر محرم کے درخواست دی ہے جبکہ بغیر”محرم“ (مرد رشتہ دار) کے تقریباً3ہزار  سے زائد خواتین نے حج 2021-22 کے لئے درخواست کی تھی۔ بغیر محرم سفرِحج کے لئے جن خواتین نے حج2022اور 2021 کے لئے درخواست دی تھی ایسی درخواست حج 2022کے لئے بھی قابلِ قبول ہوں گی۔

 بغیر محرم کے حج پر جانے والی سبھی خواتین کو بغیر قرعہ اندازی کے حج پر جانے کے انتظامات کئے گئے ہیں۔مختار عباس  نقوی نے کہا کہ اس مرتبہ حج 2022 کے لئے 21 کے بجائے 10  مراکزِ روانگی طے کئے گئے ہیں جن میں احمدآباد‘ بنگلورو‘ کوچّی‘ دہلی‘ گوہاٹی‘ حیدرآباد‘ کولکتہ‘ لکھنو‘ ممبئی اور سری نگر شامل ہیں۔

 انہوں نے کہا کہ احمدآباد مرکزِ روانگی سے گجرات کے عازمینِ حج، بنگلورو مرکزِ روانگی سے کرناٹک اور آندھرا پردیش کے چِتّور ضلع کے عازمینِ حج‘ کوچّی مرکزِ روانگی سے کیرالا‘ لکشادیپ‘ پڈوچیری‘ ٹاملناڈو، انڈمان اور نکوبار کے عازمینِ حج‘ دہلی مرکزِ روانگی سے دہلی‘ پنجاب‘ ہریانہ‘ ہماچل پردیش‘ چندی گڑھ‘ اتراکھنڈ‘ مغربی اتر پردیش اور راجستھان کے عازمینِ حج‘ سفرِ حج 2022 پر جاسکیں گے۔

گوہاٹی مرکزِ روانگی سے آسام‘ میگھالیہ‘ منی پور‘ ناگا لینڈ‘ اروناچل پردیش اور سکم کے عازمینِ حج‘ حیدرآباد مرکزِ روانگی سے آندھرا پردیش اور تلنگانہ کے عازمینِ حج‘ کولکتہ مرکزِ روانگی سے مغربی بنگال‘ اوڈیشہ‘ تریپورہ‘ جھارکھنڈ اور بہار کے عازمینِ حج‘ حج 2022پر روانہ ہو سکیں گے۔

لکھنو مرکزِ روانگی سے مغربی اتّرپردیش کو چھوڑ کر سارے اتّر پردیش کے عازمینِ حج، ممبئی مرکزِ روانگی سے مہاراشٹر‘ مدھیہ پردیش‘ چھتّیس گڑ ھ‘ دمن اور دیو‘ دادرا اور نگر حویلی اور گوا کے عازمینِ حج اور سری نگر مرکزِ روانگی سے جمّوں‘ کشمیر‘ لیہہ۔ لداخ۔کارگل کے عازمینِ حج، حج 2022  پر جا سکیں گے۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.