ایر انڈیا کو ٹاٹا کے حوالے کرنے وزرا کے گروپ کی منظوری

تقریباً 67 سال کے بعد ایر انڈیا دوبارہ ٹاٹا کے حوالے کی جانے والی ہے۔ اگر ذرائع کی مانیں تو اس معاہدہ کو دسمبر تک حتمی شکل دی جا سکتی ہے۔

نئی دہلی: دیوالیہ ہونے کے دہانے پر سرکاری ملکیت والی ایئر لائن ایئر انڈیا کو وزراء کے گروپ نے ٹاٹا سنس کے حوالے کرنے کی منظوری دے دی ہے اس معاملے سے وابستہ ذرائع نے بتایا کہ ایئر انڈیا کیلئے ٹاٹا سنس کی بولی وزیر داخلہ امیت شاہ کی سربراہی میں وزراء کے گروپ کے سامنے رکھی گئی تھی ، جسے منظوری دے دی گئی ہے اس کیلئے اسپائس جیٹ کے اجے سنگھ نے ذاتی سطح پر بولی لگائی تھی حالانکہ اس بابت ابھی تک کوئی باضابطہ اعلان نہیں کیا گیا ہے ، لیکن ایک یا دو دن میں حکومت اس حوالے سے معلومات دئیے جانے کا امکان ہے۔

سول ایوی ایشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ اس کیلئے ٹاٹا سنس نے سب سے اونچی بولی لگائی تھی ۔ ٹاٹا سنس کی جانب سے اس کیلئے حکومت کی جانب سے مقرر کردہ کم از کم بولی سے تقریبا تین ہزار کروڑ روپے سے زیادہ کی بولی لگائے جانے کی اطلاعات ہیں۔

ایئر لائن کی بنیاد ٹاٹا گروپ جے آر ڈی ٹاٹا نے سال 1932 میں رکھی تھی لیکن بعد میں اسے قومیا (نیشنلائز) لیا گیا تھا ۔ اب تقریباً 67 سال کے بعد یہ ایئر لائن دوبارہ ٹاٹا کے حوالے کی جانے والی ہے۔ اگر ذرائع کی مانیں تو اس معاہدہ کو دسمبر تک حتمی شکل دی جا سکتی ہے۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.