شاملی میں ایک گروپ کے ہاتھوں مسلم نوجوان کا قتل

ایک سینئر پولیس عہدیدار نے بتایا کہ سمیر نامی نوجوان بس اسٹانڈ پر کھڑا تھا کہ ایک گروپ کے ساتھ اس کی لڑائی ہوگئی تاہم جھگڑے کی وجہ کا پتہ نہیں چل سکا۔

مظفرنگر: اترپردیش کے ضلع شاملی میں ایک 24 سالہ شخص کو مبینہ طور پر 10 افراد نے اس وقت پیٹ پیٹ کر ہلاک کرڈالا جب وہ بنات ٹاون کے بس اسٹانڈ پر بس کے آنے کا انتظار کررہا تھا۔

ایک سینئر پولیس عہدیدار نے بتایا کہ سمیر نامی نوجوان بس اسٹانڈ پر کھڑا تھا کہ ایک گروپ کے ساتھ اس کی لڑائی ہوگئی تاہم جھگڑے کی وجہ کا پتہ نہیں چل سکا۔

سپرنٹنڈنٹ آف پولیس سیکرتی مادھو مشرا نے کہا کہ 10 افراد کے خلاف ایک کیس درج کیا گیا ہے جن میں سے 8 افراد کے نام رپورٹ میں لئے گئے ہیں۔

ملزمین مفرور ہیں جنہیں تلاش کیا جارہا ہے۔ مہلوک نوجوان کی نعش پوسٹ مارٹم کیلئے بھیجی گئی ہے۔

سمیر کے خاندان کی جانب سے دائر کردہ شکایت کے مطابق یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب سمیر گھر واپس ہورہا تھا۔ اُسے شدید زخمی حالت میں دواخانہ لے جایا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دیا۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.