آشیش مشرا کی گن سے ہی گولیاں چلی تھیں: فارنسک رپورٹ

لکھیم پور پولیس نے آشیش مشرا اور انکت داس کے لائسنس ڈویپن ضبط کرلئے تھے اور 15 اکتوبر کو انہیں فارنسک جانچ کے لئے بھیج دیا تھا جس کی رپورٹ منگل کے دن آئی۔

لکھیم پور کھیری(یوپی): مرکزی وزیر اجئے مشرا تینی کے لڑکے آشیش مشرا کی پریشانیاں بڑھنے والی ہیں کیونکہ فارنسک سائنس لیباریٹری نے توثیق کردی ہے کہ 3  اکتوبر کو لکھیم پور کھیری تشدد کے دوران جو گولیاں چلیں وہ انکت داس اور آشیش مشرا کے لائسنسڈ گن کی ہیں۔

 لکھیم پور پولیس نے آشیش مشرا اور انکت داس کے لائسنس ڈویپن ضبط کرلئے تھے اور 15  اکتوبر کو انہیں فارنسک جانچ کے لئے بھیج دیا تھا جس کی رپورٹ منگل کے دن آئی۔ کسانوں نے الزام عائد کیا تھا کہ آشیش اور انکت نے کئی راؤنڈ فائر کئے تھے تاہم دونوں نے اس کی تردید کی تھی۔

3  اکتوبر کے تشدد میں 8  افراد ہلاک ہوئے تھے۔ یہ تشدد اترپردیش کے ڈپٹی چیف منسٹر کیشو پرساد موریہ کے دورہ ئ لکھیم پور کھیری کے خلاف احتجاج کے دوران برپا ہوا تھا۔بی جے پی ورکرس جس کار میں سوار تھے اس نے 4 کسانوں اور ایک صحافی کو روند ڈالا تھا۔ مرکزی وزیر اجئے مشرا تینی کے لڑکے آشیش مشرا سمیت 13  افراد کو اس سلسلہ میں گرفتار کیا جاچکا ہے۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.