آشیش مشرا‘ 14دن کی عدالتی تحویل میں

تحقیقاتی ٹیم کے ایک سینئر عہدیدار کے بموجب آشیش یہ نہیں بتا سکا کہ 3اکتوبر کو 2:30 بجے 3:30 بجے (دن) اس کی لوکیشن کہاں تھی۔ اس کے فون کی لوکیشن اسے جائے واردات کے قریب بتارہی ہے۔

لکھیم پور کھیری: مرکزی مملکتی وزیر داخلہ اجئے مشرا کے لڑکے آشیش مشرا کو ہفتہ کی رات دیر گئے یہاں کی عدالت میں پیش کیا گیا جس نے اسے 14دن کی عدالتی تحویل میں بھیج دیا۔ لکھیم پور کھیری تشدد کے سلسلہ لگ بھگ 12 گھنٹوں کی پوچھ تاچھ کے بعد کرائم برانچ دفتر میں میڈیکل ٹیم نے اس کا معائنہ کیا اور پھر اسے جوڈیشیل مجسٹریٹ کے سامنے پیش کیا گیا۔ پولیس ریمانڈ کی درخواست کی سماعت پیر کو 11بجے دن دہوگی۔

 آشیش مشرا نے جو علاقہ میں مونوبھیا کہلاتا ہے ضلع جیل میں رات گذاری۔ وہ ہفتہ کے دن 10:30 بجے خصوصی تحقیقاتی ٹیم کے سامنے حاضر ہوا تھا۔ کل رات لگ بھگ 11بجے اسے گرفتار کیا گیا۔ لگ بھگ 38برس کا آشیش‘ پارلیمانی حلقہ لکھیم پور کھیری میں اپنے باپ کی سیاسی سرگرمیوں کا انچارج ہے۔

 آئی اے این ایس کے بموجب سوالات کا دو ٹوک جواب نہ دینے کی وجہ سے آشیش مشرا کو جیل جانا پڑا۔ اسے کل رات 10:50 بجے گرفتار کرکے لگ بھگ 1بجے (رات) جیل بھیج دیا گیا۔ تحقیقاتی ٹیم کے ایک سینئر عہدیدار کے بموجب آشیش یہ نہیں بتا سکا کہ 3اکتوبر کو 2:30 بجے 3:30 بجے (دن) اس کی لوکیشن کہاں تھی۔ اس کے فون کی لوکیشن اسے جائے واردات کے قریب بتارہی ہے۔

 مرکزی وزیر کے لڑکے نے مانا کہ کسانوں کو کچلنے والی گاڑی(ایس یو وی) اسی کی ہے لیکن وہ اس وقت اپنی گاڑی میں موجود نہیں تھا۔ ہر سوال کے جواب میں وہ ایک ہی جواب دیتا رہا کہ میں وہاں موجود نہیں تھا۔ بسا اوقات وہ آپے سے باہر ہوگیا اور کہنے لگا کہ مجھ سے ایک لاکھ مرتبہ پوچھو گے تب بھی میرا جواب یہی ہوگا۔

 اسی دوران لکھیم پور کھیری پولیس نے کانگریس کے سابق رکن پارلیمنٹ آنجہانی اکھیلیش داس کے بھتیجہ انکت داس کو حراست میں لے لیا ہے۔ کہا جاتا ہے کہ وہ 3اکتوبر کو آشیش مشرا کی ایس یو وی کے پیچھے چلنے والی گاڑی چلا رہا تھا۔ اس پر یہ بھی الزام ہے کہ اس نے آشیش مشرا  کو وہاں سے بچ نکلنے میں مدد دی۔ اسی دوران آشیش کے ایک اور مددگار کو بھی حراست میں لیا گیا۔ ہے۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.