امریندر سنگھ، پنجاب وکاس پارٹی قائم کریں گے

امریندر سنگھ‘ اپنی نئی پارٹی بنانے پر غور و فکر کے لئے چند دن میں اپنے قریبی قائدین کی میٹنگ طلب کریں گے۔

نئی دہلی: سابق چیف منسٹر پنجاب کپتان امریندر سنگھ عنقریب نئی پارٹی کا اعلان کرنے والے ہیں۔ ذرائع کے بموجب نئی پارٹی کا نام پنجاب وکاس پارٹی ہوگا۔

امریندر سنگھ‘ اپنی نئی پارٹی بنانے پر غور و فکر کے لئے چند دن میں اپنے قریبی قائدین کی میٹنگ طلب کریں گے۔

ان کی نئی پارٹی میں سدھو مخالف دھڑے کے قائدین شامل ہوں گے۔ قبل ازیں کپتان نے کہا تھا کہ ان کا پہلا ہدف‘سابق صدر پنجاب کانگریس نوجوت سنگھ سدھو کو ہرانا ہے۔

اسمبلی الیکشن میں کپتان کی نئی پارٹی کی طرف سے سدھو کے خلاف طاقتور امیدوار میدان میں اتارا جائے گا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ کپتان‘ پنجاب کے تمام کسان رہنماؤں سے بھی ربط پیدا کریں گے۔

وہ چھوٹی جماعتوں سے بھی رابطہ قائم کریں گے۔ جمعرات کے دن کپتان  امریندر سنگھ نے کہا تھا کہ میں 52 برس سے سیاست میں ہوں‘ کانگریس قیادت نے میرے ساتھ غلط برتاؤ کیا۔

 10:30 بجے سونیا گاندھی نے مجھے مستعفی ہونے کو کہا‘ میں نے کوئی سوال نہیں کیا۔ 4 بجے گورنر کے پاس گیا اور استعفیٰ پیش کردیا۔ 50 سال بعد بھی اگر آپ پر شبہ کیا جاتا ہے تو میری ساکھ تو داؤ پر لگ گئی۔ بھروسہ نہ ہو تو پارٹی میں رہنے کی کیا تُک ہے۔

اس بیان کے بعد انہوں نے کانگریس چھوڑنے کا اعلان کیا تھا۔ انہوں نے واضح کردیا تھا کہ وہ کانگریس چھوڑرہے ہیں لیکن بی جے پی میں شامل نہیں ہوں گے۔

 انہوں نے یہ بھی کہا کہ بے عزتی سے انہیں بڑی ٹھیس پہنچی ہے۔ امریندر سنگھ نے کانگریس پارٹی چھوڑنے کا اعلان پہلی مرتبہ نہیں کیا ہے۔

1980میں انہوں نے کانگریس کے انتخابی نشان پر لوک سبھا الیکشن جیتا تھا لیکن 1984 کے آپریشن بلو اسٹار کے بعد انہوں نے کانگریس چھوڑکر اکالی دل میں شمولیت اختیار کرلی تھی۔وہ 1998 میں کانگریس میں واپس آئے تھے۔

ذریعہ
آئی اے ین ایس

تبصرہ کریں

یہ بھی دیکھیں
بند کریں
Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.