حلیف پارٹیوں کو 50نشستیں دیں گے: اکھلیش

پارٹی کے اعلی عہدیداران کے ذرائع نے بتایا کہ 403 اسمبلی سیٹوں میں سے کم سے کم 350 سیٹوں پر ایس پی اپنے امیدوار میدان میں اتارے گی۔

لکھنؤ: اترپردیش میں آئندہ سال ہونے والے اسمبلی انتخابات کے پیش نظر سماج وادی پارٹی(ا یس پی) نے چھوٹی پارٹیوں سے اتحاد کے روڈ میپ کو حتمی شکل دیتے ہوئے سبھی اتحادی پارٹیوں کو زیادہ سے زیادہ 50سیٹیں دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

پارٹی کے اعلی عہدیداران کے ذرائع نے بتایا کہ 403 اسمبلی سیٹوں میں سے کم سے کم 350 سیٹوں پر ایس پی اپنے امیدوار میدان میں اتارے گی۔ ان میں اتحادی پارٹی کے کچھ امیدوار ایسے بھی ہونگے جو ایس پی کے انتخابی نشان پر اپنا قسمت آزمائیں گے۔

قابل ذکر ہے کہ ایس پی کے ساتھ سہیل دیو بھارتیہ سماج پارٹی(ایس پی ایس پی) اور راشٹرایہ لوک دل)آر ایل ڈی) کے اتحاد کا خاکہ تیار کرلیا گیا ہے۔ ایس پی کے اتحاد کے روڈ میپ کے دائرے میں ایس بی ایس پی اور آر ایل ڈی کے بعد اب عام آدمی پارٹی اور اپنا دل(کرشنا گروپ) بھی آگیا ہے۔

ذرائع کے مطابق ایس پی سربراہ اکھلیش یادو اور آر ایل ڈی صدر جینت چودھری کے درمیان منگل کوہوئی کئی دور کی میٹنگ میں آر ایل ڈی کو 36سیٹیں دینے پر اتفاق ہوا ہے۔

ان میں سے 8سیٹوں پر آر ایل ڈی کے امیدوار ایس پی کے انتخابی نشان پر انتخابی میدان میں اتریں گے۔ جبکہ 28سیٹوں پر آر ایل ڈی کے انتخابی نشان پر امیدوار اپنا قسمت آزمائیں گے۔ آر ایل ڈی اتحاد کے تحت ایس پی سے 50سیٹوں کا مطالبہ کیا تھا۔ فی الحال مغربی اترپردیش کی چرتھاول سیٹ سمیت تین سیٹوں پر امیدوار کے سلسلے میں فیصلہ نہیں ہوپایا ہے۔

چرتھاول سیٹ سے جینت خود انتخابی میدان میں اترنا چاہتے ہیں۔جبکہ حال ہی میں ایس پی چھوڑ کر بی جے پی میں شامل ہوئے ہریندر ملک کو سماج وادی پارٹی اس سیٹ سے اپنا امیدوار بنانا چاہتی ہے۔

سیٹوں کی تقسیم کے سلسلے میں اکھلیش یادو نے جینت سے منگل کو فیصلہ کن دور کی بات چیت کے بعد چہارشنبہ کو عاپ کے لیڈر سنجے سنگھ اور اپنا دل کی کرشنا پٹیل سے بھی ملاقات کی ہے۔

ذریعہ
یو این آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.