حکومت ’اسکرب ٹائفس‘ علاج معالجہ کی بہتر سہولتیں یقینی بنائے: پرینکا

اطلاعات کے بموجب محکمہ صحت نے 2 تا 45 برس کے 29مریضوں کی لیاب رپورٹ میں اسکرب ٹائفس کی توثیق کے بعد الرٹ جاری کردیا۔

نئی دہلی: متھرا میں ”اسکرب ٹائفس“ کے 29 کیسس کا پتہ چلنے کے بعد کانگریس جنرل سکریٹری انچارج اترپردیش پرینکا گاندھی وڈرا نے پیر کے دن ریاست میں علاج معالجہ کی بہتر سہولتوں کا مطالبہ کیا۔

انہوں نے ہندی میں ٹویٹ کیا کہ فیروزآباد‘ متھرا‘ آگرہ اور یوپی کے دیگر مقامات پر بخار کی وجہ سے بچوں اور بڑوں کی اموات ہوئی ہیں۔ حکومت یوپی کو مرض پر قابو پنے اور علاج معالجہ کی بہتر سہولتیں فراہم کرنے کے اقدامات کرنے چاہئیں۔

اطلاعات کے بموجب محکمہ صحت نے 2 تا 45 برس کے 29مریضوں کی لیاب رپورٹ میں اسکرب ٹائفس کی توثیق کے بعد الرٹ جاری کردیا۔

اسکرب ٹائفس کی علامات میں بخار‘ سر درد‘ بدن درد شامل ہیں۔ اس کے نتیجہ میں نمونیا‘ دماغی بخار‘ دماغی تبدیلیاں (کنفیوژن تا کوما) اور حرکت قلب بند ہوسکتی ہے۔

ایڈیشنل ڈائرکٹر محکمہ صحت اترپردیش ا کے سنگھ نے بتایا کہ ضلع متھرا سے کم ازکم 29 اسکرب ٹائفس کیسس رپورٹ ہوئے ہیں۔

درکار دوائیں مریضوں کو فراہم کردی گئیں۔ کسی بھی مریض کی حالت نازک نہیں ہے۔ ہم نے دیگر اضلاع میں اس کے پھیلاؤ کے تعلق سے الرٹ جاری کردیا ہے۔ جلد تشخیص ضروری ہے۔

مریضوں کو اینٹی بائیوٹک دوائیں دی جارہی ہیں۔ ایک ہفتہ کے کورس کے بعد مریض پوری طرح ٹھیک ہوجاتے ہیں۔ چیف منسٹر اترپردیش یوگی آدتیہ ناتھ نے ریاستی عہدیداروں کو ہدایت دی ہے کہ وہ متعدی امراض کا پھیلاؤ روکیں۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.