سلمان خورشید کی رہائش گاہ پر توڑ پھوڑ کرنے والے 4 گرفتار

ملزمین نے بتایا کہ وہ کندن سنگھ چلوال کی قیادت میں سلمان خورشید کے گھر احتجاج میں شرکت کے لیے گئے تھے۔ اس دوران چندن نے غصے میں آکر کانگریس لیڈر کے گھر پر گولی چلا دی۔

نینیتال: رام گڑھ میں کانگریس لیڈر سلمان خورشید کے گھر کو آگ لگانے اور توڑ پھوڑ کرنے والے چار ملزمین کو پولیس نے گرفتار کر لیا ہے۔ ایک ملزم سے غیر قانونی پستول بھی برآمد ہوا ہے۔ اس معاملے کا انکشاف نینیتال پولیس نے جمعرات کو کیا۔ بھوالی کے سرکل آفیسر (سی او) بھوپیندر سنگھ دھونی نے کہا کہ واقعہ کے انکشاف کے لیے بھوالی، مکتیشور اور بھیم تال کے اسٹیشن انچارجوں کی قیادت میں تین ٹیمیں تشکیل دی گئی تھیں۔

 ملزمین کو جمعرات کی رات دیر گئے سوئس ولیج کے قریب سے گرفتار کیا گیا۔ چاروں نے اپنے جرم کا اعتراف کر لیا ہے۔ گرفتار ملزمین میں چندن سنگھ لودھیال ساکن گائوں نتھوخان، تھانہ بھوالی، کرشنا سنگھ بشٹ، امیش مہتا اور راج کمار مہتا ساکنہ گاؤں سوپی، تھانہ مکتیشور شامل ہیں۔ امیش اور راجکمار دونوں بھائی ہیں۔ پولیس کے مطابق چندن سنگھ چلوال سے 32 بور کا پستول بھی برآمد ہوا ہے۔ ملزم نے اسی پستول سے کانگریس لیڈر کے گھر پر فائرنگ کرکے اس واردات کو انجام دیا تھا۔

ملزمین نے بتایا کہ وہ کندن سنگھ چلوال کی قیادت میں سلمان خورشید کے گھر احتجاج میں شرکت کے لیے گئے تھے۔ اس دوران چندن نے غصے میں آکر کانگریس لیڈر کے گھر پر گولی چلا دی۔ باقی ملزمان نے اعتراف کیا کہ پتلا جلانے کے دوران انہوں نے کوٹھی کے کیئر ٹیکر کے ساتھ بدسلوکی اور بدتمیزی کی۔ دھونی نے بتایا کہ ملزمان کے خلاف دفعہ 147، 18، 452، 436، 504 کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے جبکہ چندن لودھیال کے خلاف بھی آرمس ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ کانگریس لیڈر سلمان خورشید کے ان کتاب میں ہندوتوا کے خلاف بیان کے بعد کچھ لوگوں نے ان کے خلاف مظاہرہ کیا اور 15 نومبر کو رام گڑھ کے ستکھولا میں کانگریس لیڈر کی رہائش گاہ پر ان کا پتلا جلایا۔ الزام ہے کہ اس دوران ملزمان نے غصے میں آکر آتش زنی، توڑ پھوڑ اور فائرنگ شروع کردی۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.