لکھیم پور کھیری تشدد‘ ایس آئی ٹی نے جرم کا منظر دوبارہ تخلیق کیا

ایس آئی ٹی نے 3 ایس یو وی گاڑیوں اور پتلوں کا انتظام کیا تھا تاکہ یہ دیکھا جاسکے کہ اس بدنصیب دن تیز رفتار گاڑیوں نے کسانوں کو کس طرح روندا تھا۔

لکھیم پور کھیری(اترپردیش): لکھیم پور کھیری واقعہ کی تحقیقات کررہی خصوصی تحقیقاتی ٹیم (ایس آئی ٹی) نے آج 4 ملزمین کی موجودگی میں جرم کا منظر دوبارہ تخلیق کیا۔ ملزمین میں مرکزی وزیر کے لڑکے آشیش مشرا‘ اس کا دوست انکت داس‘ بندوق بردار لطیف اور ڈرائیور شیکھر بھارتی بھی موجود تھے۔

 اس سارے علاقہ کا  محاصرہ کرلیا گیا تھا جہاں 3  اکتوبر کا واقعہ پیش آیا تھا جس میں ایک ایس یو وی گاڑی نے 4کسانوں کو روند دیا تھا اور بعدازاں روہنما ہوئے تشدد میں دیگر 5  افراد ہلاک ہوگئے تھے۔ملزمین سے جائے واقعہ پر موجودگی کے بارے میں سوالات کئے گئے جبکہ انہیں علم تھا کہ کسان وہاں احتجاج کررہے ہیں۔

آشیش مشرا کی پولیس تحویل کا آج آخری دن ہے۔ جائے واقعہ پر پولیس کی بھاری جمعیت تعینات کی گئی تھی۔ ایس آئی ٹی نے 3  ایس یو وی گاڑیوں اور پتلوں کا انتظام کیا تھا تاکہ یہ دیکھا جاسکے کہ اس بدنصیب دن تیز رفتار گاڑیوں نے کسانوں کو کس طرح روندا تھا۔ اس مشق کے دوران لکھنو کی فارنسک سائنس لیباریٹری کی ٹیم اور ایس آئی ٹی بھی موجود تھی۔ جائے واقعہ پر پی اے سی کے علاوہ ریاپڈ ایکشن فورس(آر اے ایف) کو بھی تعینات کیا گیا تھا۔  

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

یہ بھی دیکھیں
بند کریں
Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.