مجھے جلایا جائے، دفنایا نہ جائے: وسیم رضوی

اتوار کے دن جاری ویڈیو میں رضوی نے کہا کہ اس کی نعش اس کے ہندو دوست مہنت نرسمہانند سرسوتی (ڈاسنہ مندر) کو سونپ دی جائے۔ مہنت اس کی چتا کو آگ دیں۔

لکھنو: اترپردیش شیعہ سنٹرل وقف بورڈ کے سابق صدرنشین وسیم رضوی کو تنازعات کا شوق ہے۔ اس نے اب ایک ویڈیو ریکارڈیڈ میسیج جاری کرتے ہوئے یہ خواہش ظاہر کی ہے کہ مرنے کے بعد اسے ہندو رسم و رواج کے مطابق جلایا جائے‘ دفنایا نہ جائے۔

اتوار کے دن جاری ویڈیو میں رضوی نے کہا کہ اس کی نعش اس کے ہندو دوست مہنت نرسمہانند سرسوتی (ڈاسنہ مندر) کو سونپ دی جائے۔ مہنت اس کی چتا کو آگ دیں۔

وسیم رضوی نے قرآن کی 26 آیات کو چیلنج کرکے اور بعد میں نئی قرآن لکھنے کا دعویٰ کرکے اپنے پورے فرقہ کی برہمی جھیلی ہے۔

قرآن سے بعض آیات ہٹانے کے لئے جو اس کے بقول تشدد سکھاتی ہیں‘ سپریم کورٹ میں مفادعامہ کی درخواست (پی آئی ایل) داخل کرنے پر کہا جاتا ہے کہ بعض مسلم گروپس اسے جان سے مارنے کی دھمکی دی تھی۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.