گروگرام میں جمعہ کی نماز روکنے ہندو تنظیموں کا پھر احتجاج

تصاویر میں دکھایا گیا کہ وہ صبح سے ہی وہاں جمع ہوکر اس مقام پر والی بال کورٹ تیار کرنے کا بہانہ پیش کررہے تھے۔ دراصل وہ نماز کی ادائیگی روکنا چاہتے تھے۔

گروگرام: ہریانہ کے گروگرام میں کھلے مقام پر نماز کی مخالفت کا منظر آج پھر دکھائی دیا جب ہندو تنظیموں سے وابستہ ارکان نے سیکٹر 12A  میں مسلمانوں کو نماز ادا کرنے سے روک دیا۔

تصاویر میں دکھایا گیا کہ وہ صبح سے ہی وہاں جمع ہوکر اس مقام پر والی بال کورٹ تیار کرنے کا بہانہ پیش کررہے تھے۔ دراصل وہ نماز کی ادائیگی روکنا چاہتے تھے۔ قریب ہی گائے کا گوبر پھیلا ہوا تھا جو گزشتہ ہفتہ دائیں بازو کی تنظیموں نے پوجا منعقد کرنے وہاں ڈال دیا تھا۔

گزشتہ کئی ہفتوں سے مسلم تنظیمیں جو ان احتجاجوں کا سامنا یہاں اور دیگر مقامات پر کررہی ہیں، نے بتایا کہ آج وہ اس مقام پر نماز ادا نہیں کریں گے۔ سیکٹر 12A  کا مذکورہ مقام ان 29 مقامات میں شامل ہے جو 2018ء میں ایسے ہی تنازعات کے بعد ہندوؤں اور مسلمانوں کے مابین معاہدے کے تحت نماز کے لیے مختص کیے گئے تھے۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.