مرکزی وزیر مشرا کی گاڑی پر انڈے پھینکے گئے

این ایس یو آئی کے ریاستی صدر یاسفر نواز نے کہا کہ اوڈیشہ‘کسانوں کی ریاست ہے اور یہ بھگوان جگناتھ کی دھرتی ہے۔ ہم نے مرکزی وزیر کو خبردار کیا تھا کہ وہ اوڈیشہ میں داخل نہ ہوں کیونکہ ان کا لڑکا لکھیم پور کھیری تشدد میں مبینہ ملوث ہے۔

بھوبنیشور: کانگریس کی طلباء تنظیم نیشنل اسٹوڈنٹس یونین آف انڈیا (این ایس یو آئی) کے ارکجان نے اتوار کے دن اوڈیشہ میں بھوبنیشور ایرپورٹ کے قریب مرکزی مملکتی وزیر داخلہ اجئے مشرا کی کاروں پر قافلہ انڈے پھینکے۔ انہوں نے اجئے مشرا کے لڑکے آشیش مشرا کے لکھیم پور کھیری تشدد کیس میں مبینہ ملوث ہونے پر یہ احتجاج کیا۔

 ذرائع کے بموجب مرکزی وزیر ایک پروگرام میں شرکت کیلئے اوڈیشہ آئے ہوئے تھے۔ وہ پروگرام میں شرکت کیلئے جارہے تھے کہ این ایس یو آئی والوں نے ان کی کار پر انڈے اور کالی سیاہی پھینکی۔ انہوں نے کالی جھنڈیاں بھی دکھائیں  اور اجئے مشرا واپس جاؤ کے نعرے لگائے۔

این ایس یو آئی کے ریاستی صدر یاسفر نواز نے کہا کہ اوڈیشہ‘کسانوں کی ریاست ہے اور یہ بھگوان جگناتھ کی دھرتی ہے۔ ہم نے مرکزی وزیر کو خبردار کیا تھا کہ وہ اوڈیشہ میں داخل نہ ہوں کیونکہ ان کا لڑکا لکھیم پور کھیری تشدد میں مبینہ ملوث ہے۔ وارننگ کے باوجود اجئے مشرا‘ اوڈیشہ آئے جس کی وجہ سیاین ایس یو آئی والوں نے ان کی گاڑی پر سیاہی اور انڈے پھینکے۔

یاسرنواز نے خبردار کیا ہے کہ مرکزی وزیر جب بھی اوڈیشہ آئیں گے این ایس یو آئی اپنا کارکن احتجاج جاری رکھیں گے۔ یہ احتجاج ان کے مستعفی ہونے تک ہوتا رہے گا۔ پولیس نے بعض این ایس یو آئی کارکنوں کو حراست میں لے لیا۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.