ناگالینڈ فائرنگ: مہلوکین کی تعداد 15 ہوگئی

محکمہ دفاع نے کہا کہ باغیوں کی ممکنہ نقل و حرکت کے سلسلے میں مصدقہ خفیہ اطلاع کی بنیاد پرآپریشن چلایا گیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ اس واقعے کے نتائج پر افسوس ہے۔

کوہیما: ناگالینڈ کے مون ضلع کے اوٹنگ میں ہفتہ کے روز ہوئی فائرنگ میں مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 15 ہوگئی ہے۔ اوٹنگ میں ہفتہ کے واقعہ کے بعد حالات کافی کشیدہ ہیں۔ اس واقعے میں دو مزید لوگوں کی موت ہوگئی ، جس میں ایک سکیورٹی گارڈ بھی شامل ہے ۔

محکمہ دفاع نے کہا کہ باغیوں کی ممکنہ نقل و حرکت کے سلسلے میں مصدقہ خفیہ اطلاع کی بنیاد پرآپریشن چلایا گیا تھا۔ ناگالینڈ کے مون کے تیرو میں ایک خصوصی آپریشن چلانے کا منصوبہ تھا۔ انہوں نے کہا کہ اس واقعے کے نتائج پر افسوس ہے۔ اس واقعہ کی اعلیٰ سطحی جانچ کی جارہی ہے، جانچ کے بعد کارروائی کی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ اس واقعہ میں سکورٹی فورسز کے اہلکار بھی شدید زخمی ہوئے جس میں ایک فوجی کی موت ہوئی ہے۔

اس واقعے کے بعد مشتعل لوگوں نے مون شہر میں جمع ہو کر آسام رائفلز کے کیمپ پر حملہ کر دیا، جس میں کیمپ کے کچھ حصوں کو نقصان پہنچا ہے، جس کے بعد آسام رائفلز نے اپنی حفاظت کے لیے گولی چلائی، جس میں ایک شہری کی موت ہو گئی اور کئی لوگ زخمی بتائے جا رہے ہیں۔ ماس دوران علاقے میں دفعہ 144 نافذ کر دی گئی ہے۔

ضلع انتظامیہ تمام سرگرمیوں پر نظر رکھے ہوئے ہے اور لوگوں سے امن وامان برقرار رکھنے کی اپیل کی ہے ۔ ریاستی انتظامیہ نے احتیاط کے طور پر ریاست میں انٹرنیٹ خدمات پر پابندی عائد کر دی ہے۔

ذریعہ
یو این آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.