پاکستا ن کے حمایت یافتہ خالصتانی امریکہ میں سرگرم

وزارت امور خارجہ کے ترجمان ارندم باگچی، واشنگٹن اور نیویارک میں ایک ممنوعہ خالصتانی گروپ کی جانب سے مودی کے دورہ کے موقع پر مظاہروں کی منصوبہ بندی کی اطلاعات کے بارے میں سوال کا جواب دے رہے تھے۔

نئی دہلی: آئندہ ہفتہ وزیراعظم نریندرمودی کے دورہ سے قبل ہندوستان نے آج امریکی سرزمین سے پاکستان کے حمایت یافتہ علحدگی پسند خالصتانی گروپوں کی مخالف بھارت بڑھتی ہوئی سرگرمیوں کی اطلاعات پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

وزارت امور خارجہ کے ترجمان ارندم باگچی نے کہا کہ وزیراعظم اور ان کے وفد کی سلامتی کو یقینی بنانا ایک اہم مسئلہ ہے۔

وہ واشنگٹن اور نیویارک میں ایک ممنوعہ خالصتانی گروپ کی جانب سے مودی کے  دورہ کے موقع پر مظاہروں کی منصوبہ بندی کی اطلاعات کے بارے میں سوال کا جواب دے رہے تھے۔

امریکی تھنک ٹینک کی رپورٹ کے حوالہ سے انہوں نے کہا کہ اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ پاکستان کس طرح ہندوستان کے خلاف امریکہ سے سرگرمیاں جاری رکھنے کی کوشش کررہا ہے۔

ارندم باگچی نے میڈیا کے بعض گوشوں کی ان اطلاعات کو خارج کردیا کہ امریکہ افغانستان میں ہندوستان کے فضائی حدود سے انسداد دہشت گرد حملے انجام دینے کا راستہ تلاش کرنے کیلئے نئی دہلی کے ساتھ رابطہ میں ہے۔

 اس تعلق سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ افغانستان پر امریکی کانگریس کے ساتھ ہونے والی بات چیت میڈیا میں شائع اطلاعات سے کچھ مختلف ہے اور میں اس مسئلہ پر میڈیا کے رپورٹس کا جواب دینا نہیں چاہتا۔ انہوں نے افغان دارالحکومت کابل میں ایک ہندوستانی شہری کے اغوا سے متعلق اطلاعات پر کہا کہ بھارت تمام متعلقین سے رابطہ میں ہے۔ اطلاعات کے مطابق کابل میں منگل کو بنسری لال ارندے کا اغوا کرلیا گیا ہے۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.