گھر گھرجاکر ٹیکہ دینے کی ہدایت سے سپریم کورٹ کا انکار

جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے یوتھ بارایسوسی ایشن آف انڈیا کی طرف سے دائردرخواست کو مسترد کردیا اور عرضی گزار کو اپنا مشورہ وزارت صحت اور خاندانی بہبود کے سامنے رکھنے کی چھوٹ دی ۔

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے گھر گھر جا کر کورونا مخالف ٹیکہ کاری کی ہدایت دینے سے چہارشنبہ کے روز انکار کر دیا۔

جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے یوتھ بارایسوسی ایشن آف انڈیا کی طرف سے دائردرخواست کو مسترد کردیا اور عرضی گزار کو اپنا مشورہ وزارت صحت اور خاندانی بہبود کے سامنے رکھنے کی چھوٹ دی ۔

بنچ نے کہا کہ ممکن ہے کہ عرضی گزار کی جانب سے وزارت صحت اور خاندانی بہبود کو تجویز پیش کرنا فائدہ مند ہو۔ عرضی گزار نے اپنی درخواست میں کہا تھا کہ تمام شہریوں ، بالخصوص معذوروں ، بزرگوں ، پسماندہ افراد ، کمزور طبقات سے تعلق رکھنے والے افراد اور آن لائن رجسٹریشن کرانے والے لوگوں کے لیے گھر گھر ٹیکہ کاری کے انتظامات کیے جائیں۔

(یو این آئی)

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.