حبیب گنج کا نام بدلنے پر شیوراج نے وزیر اعظم کا شکریہ ادا کیا

بھوپال حکومت کی طرف سے بھیجی گئی تجویز میں کہا گیا ہے کہ اس اسٹیشن کو 100 کروڑ روپے کی لاگت سے دوبارہ تیار کیا گیا ہے۔ اس کا افتتاح 15 نومبر کو بھگوان برسا منڈا کے یوم پیدائش پر ہونا ہے اور اس دن کو قبائلی فخر کے دن کے طور پر منایا جارہا ہے۔

بھوپال: چیف منسٹر شیوراج سنگھ چوہان نے مدھیہ پردیش کے دارالحکومت بھوپال میں نجی حکومت کی شراکت (پی پی پی) کے تحت جدید ترین حبیب گنج ریلوے اسٹیشن کو رانی کملا پتی اسٹیشن کے طور پر دوبارہ ترقی دینے کے لیے وزیر اعظم نریندر مودی کا شکریہ ادا کیا ہے۔

آج اپنے ٹوئٹ میں چوہان نے بتایا کہ وہ حبیب گنج ریلوے اسٹیشن کا نام بدل کر گونڈ رانی کملا پتی کے نام پر رکھنے کے لیے ریاست کے عوام کی جانب سے مسٹر مودی کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔ انہوں نے اس فیصلے کو ایک اعزاز اور گونڈ خاندان کی شاندار تاریخ، شجاعت اور بہادری کو حقیقی خراج عقیدت قرار دیا۔

انہوں نےبتایا کہ رانی کملا پتی مدھیہ پردیش کی شاندار تاریخ کا ایک اٹوٹ حصہ تھیں جنہوں نے قبائلی ثقافت، فن اور روایات کے تحفظ کے ساتھ ساتھ زندگی کی بہترین اقدار کے لیے اپنی جان کا نذرانہ پیش کیا۔ رانی کملا پتی نہ صرف مدھیہ پردیش بلکہ پورے ملک میں خواتین کو بااختیار بنانے اور ان کے احترام کی علامت ہیں۔

ریاستی حکومت نے کل ریلوے کی وزارت کو ایک تجویز بھیجی تھی جس میں اس اسٹیشن کا نام رانی کملا پتی ریلوے اسٹیشن رکھنے کی درخواست کی گئی تھی۔ اس پر فوری کارروائی کرتے ہوئے وزارت ریلوے کے متعلقہ محکموں نے اس تجویز کو تقریباً منظوری دے دی ہے۔ اس کا باقاعدہ اعلان بھی جلد کیے جانے کا امکان ہے۔

ریاستی حکومت کی طرف سے بھیجی گئی تجویز میں کہا گیا ہے کہ اس اسٹیشن کو 100 کروڑ روپے کی لاگت سے دوبارہ تیار کیا گیا ہے۔ اس کا افتتاح 15 نومبر کو بھگوان برسا منڈا کے یوم پیدائش پر ہونا ہے اور اس دن کو قبائلی فخر کے دن کے طور پر منایا جارہا ہے۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.