پیگاسس مسئلہ پر بحث کرانے کا اسپیکر خود فیصلہ نہیں کرسکتا: اوم برلا

واضح رہے کہ اپوزیشن نے پیگاسس معاملے پر بحث کا مطالبہ کرتے ہوئے مانسون اجلاس کی کارروائی میں مسلسل خلل ڈالا تھا جس کی وجہ سے ایوان کی کارروائی کو بار بار ملتوی کرنا پڑا۔

نئی دہلی: لوک سبھا کے اسپیکر اوم برلا نے آج کہا کہ پریسائیڈنگ آفیسر، پیگاسس جاسوسی جیسے معاملے پر ایوان میں بحث کرانے کا ازخود فیصلہ نہیں لے سکتا اور ایسا فیصلہ بزنس ایڈوائزری کمیٹی کی میٹنگ میں کیا جاتا ہے۔

اوم برلا نے پیر کو یہاں ایک پریس کانفرنس میں سوالوں کے جواب میں یہ بات کہی۔

ان سے پوچھا گیا تھا کہ کیا وہ پارلیمنٹ کے آئندہ سرمائی اجلاس کے دوران پیگاسس جاسوسی کیس پر بحث کی اجازت دیں گے؟ واضح رہے کہ اپوزیشن نے پیگاسس معاملے پر بحث کا مطالبہ کرتے ہوئے مانسون اجلاس کی کارروائی میں مسلسل خلل ڈالا تھا جس کی وجہ سے ایوان کی کارروائی کو بار بار ملتوی کرنا پڑا۔

انہوں نے بتایا کہ ایوان کی بزنس ایڈوائزری کمیٹی کے اجلاس میں جن امور پر اتفاق ہوگا وہ ان پر بات کرائیں گے۔ مسائل پر بات کرنے کے لیے حکمران جماعت اور اپوزیشن کے درمیان اتفاق رائے ضروری ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ پریسائیڈنگ آفیسرس اس حوالے سے اپنے فیصلے خود نہیں کرتے۔ قواعد و ضوابط کے تحت مختلف امور پر بات چیت کی بھی اجازت ہے۔

ذریعہ
یو این آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.