یو پی ایس سی نتائج، صرف 32 مسلم امیدوار منتخب

ملک کی 15 فیصد مسلم آبادی کے تناسب سے دیکھا جائے تو 120 سے زائد امیدوار منتخب ہونے چاہئیں مگر اتنی قلیل تعداد میں مسلمانوں کی آئی اے ایس میں تقرری بھی سدرشن ٹی وی کے مالک سریش چوہنکے جیسے لوگوں کو ہضم نہیں ہوتی اور وہ یو پی ایس سی جہاد کے نام سے اپنے چینل پر نفرت انگیز مہم چلاتے ہیں۔

حیدرآباد: یونین پبلک سروس کمیشن (یو پی ایس سی) نے 24 ستمبر 2021 کو سول سرویس امتحانات 2020 کے نتائج کا اعلان کیا، جس میں 761 امیدواروں کے مختلف خدمات پر تقرر کے لئے سفارش کی گئی ہے۔

انڈین انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی بمبئی کے بی ٹیک (سول انجینئرنگ گریجویٹ) شبھم کمار نے 761 امیدواروں کی فہرست میں پہلا مقام حاصل کیا ہے جبکہ 2015 کی پہلی دلت ٹاپر ٹینا ڈابی کی بہن ریا ڈابی نے 15 واں رینک حاصل کرتے ہوئے تاریخ رقم کی ہے۔

دوسری طرف جملہ منتخب 761 امیدواروں میں صرف 32 مسلم شامل ہیں جنہوں نے سیول سرویسس میں رینک حاصل کیا ہے۔ مسلم امیدواروں میں سب سے بڑا رینک صدف چودھری کا جنہیں فہرست میں 23 واں مقام ملا ہے جبکہ فیضان احمد کو 58 اور دینا دستگیر کو 63 واں رینک حاصل ہوا ہے۔ اولین 100 امیدواروں کی فہرست میں تین مسلم نوجوان شامل ہیں جبکہ گذشتہ سال یعنی 2019 میں صرف ایک مسلم امیدوار کا نام ٹاپ 100 میں شامل تھا مگر گذشتہ سال جملہ 43 مسلمان لڑکوں نے آئی اے ایس کریک کیا تھا۔

سیول سرویسس انٹرویو کے لئے مجموعی طور پر 2046 امیدواروں کو شارٹ لسٹ کیا گیا تھا۔ 761 کامیاب امیدواروں میں 263 کا تعلق عام زمرہ سے ہے جبکہ 86 کا معاشی طور پر کمزور طبقہ سے ہے۔229  امیدوار دیگر پسماندہ طبقات سے، 122 امیدوار درج فہرست ذاتوں سے جبکہ 61 کا تعلق درج فہرست قبائل سے ہے۔

مسلم آبادی کے مطابق سول سرویسس میں متناسب نمائندگی کے لحاظ سے 120 سے زائد مسلم امیدوار منتخب ہونے چاہئیں تھے مگر 50 سے بھی کم مسلم امیدوار منتخب ہونے کے باوجود فرقہ پرست اور کٹر ہندوتوا نظریہ کے حامل سریش چوہنکے نے سدرشن ٹی وی پر یو پی ایس سی جہاد کے نام سے نفرت انگیز مہم چلائی تھی۔ ملک کی 15 فیصد آبادی کے تناسب سے قلیل تعداد میں مسلمانوں کی آئی اے ایس میں تقرری، ان زہریلے اور فرقہ پرست لوگوں کو ہضم نہیں ہوتی۔

امیدواروں کے لئے 8 جنوری سے 17 جنوری تک مین ایگزام منعقد کئے گئے تھے جبکہ 2 اگست سے 22 ستمبر تک انٹرویو لئے گئے جس کے بعد 24 ستمبر کو کامیاب امیدواروں کی فہرست جاری کی گئی۔ اہم تحریری امتحان (مین ایگزام) سے پہلے اکتوبر 2020 میں ابتدائی امتحان منعقد ہوا تھا۔

سول سرویسس امتحان 2020 میں منتخب ہونے والے مسلم امیدواروں کی فہرست یہ ہے۔ قوسین میں رینک دیا گیا ہے۔

  1. صدف چوہدری (23)
  2. فیضان احمد (58)
  3. دھینا دستگیر (63)
  4. محمد منظر حسین انجم (125)
  5. شاہد احمد (129)
  6. شہنشاہ کے ایس (142)
  7. محمد عاقب (203)
  8. شہناز آئی (217)
  9. وسیم احمد بھٹ (225)
  10. بشریٰ بانو (234)
  11. ٹی شاہنواز (250)
  12. محمد حارث صمیر (270)
  13. التمش غازی (282)
  14. احمد حسن الزمان چوہدری (283)
  15. سارہ اشرف (316)
  16. محب اللہ انصاری (389)
  17. انیس ایس (403)
  18. زیبا خان (423)
  19. فیصل رضی (447)
  20. ایس محمد یعقوب (450)
  21. سبیل پوواکندل (470)
  22. ریحان کھتری (478)
  23. محمد جاوید اے (493)
  24. الطاف محمد شیخ (545)
  25. خان عاصم کفایت خان (558)
  26. سید زاہد علی (569)
  27. شاکراحمد اے ٹونڈی خان (583)
  28. محمد رضوان آئی (589)
  29. محمد شاہد (597)
  30. اقبال رسول ڈار (611)
  31. عامر بشیر (625)
  32. ماجد اقبال خان (738)

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.