اے پی میں تلگودیشم پارٹی کے کئی قائدین گھروں پر نظر بند، کئی گرفتار

تلگودیشم پارٹی کے ایم پی رام موہن نائیڈو اور پارٹی کے دیگر قائدین کو آر ٹی سی کا مپلکس سریکا کولم میں دھرنا منظم کرنے کی پاداش میں گرفتار کرلیا گیا۔ سابق وزیر ورکن پولٹ بیورو کالا وینکٹ راؤ کو راجم میں گھر سے باہر نکلنے نہیں دیا گیا۔

امراوتی: ریاست آندھرا پردیش کے طول و عرض میں آج اپوزیشن تلگودیشم کے کئی قائدین کو گرفتار کیا گیا ہے۔ ٹی ڈی پی نے پارٹی دفاتر پر حملوں کیخلاف بطور احتجاج چہارشنبہ کے روز ریاست بھر میں ایک روزہ بند کا اعلان کیا تھا اس بند کے دوران تلگودیشم پارٹی کے کئی قائدین کو گرفتار کرلیا گیا۔

 صبح سے قبل ہی ٹی ڈی پی کے کئی اعلیٰ قائدین کو گھروں پر نظر بند کردیا گیا تاکہ یہ قائدین گھروں سے باہر نکل کر احتجاج میں شرکت نہ کرسکیں۔ پارٹی کے کئی قائدین اور ورکرس سڑکوں پر آگئے اور زبردستی بند کرانے لگے جس پر انہیں گرفتار کیا گیا ہے۔ ٹی ڈی پی کے قائدین اور کارکن جو اپنے ہاتھوں میں پارٹی پرچم کے علاہ سیاہ پرچم تھامے ہوئے تھے۔حکومت کے خلاف نعرے لگائے۔ کئی احتجاجی قائدین کو تمام اضلاع میں اے پی آرٹی سی کی بسوں کو زبردستی روکتے ہوئے دیکھا گیا۔

تلگودیشم پارٹی کے ایم پی رام موہن نائیڈو اور پارٹی کے دیگر قائدین کو آر ٹی سی کا مپلکس سریکا کولم میں دھرنا منظم کرنے کی پاداش میں گرفتار کرلیا گیا۔ سابق وزیر ورکن پولٹ بیورو کالا وینکٹ راؤ کو راجم میں گھر سے باہر نکلنے نہیں دیا گیا۔ ضلع کرنول میں بھی ٹی ڈی پی کے سر کردہ قائدین کو گھروں پر نظر بند کردیا گیا جن قائدین کو گھروں پر نظر بند کردیا گیا ان میں ایم ایل اے مینکاکشی نائیڈو، ٹکا ریڈی، کے سجاتماں، ایس وینکٹیشور لی، کے ای  پربھاکر، بھوما برہما نند ریڈی اور ایم ایل سی فاروق شامل ہیں۔

 راجہ مہندر اورم میں ایم ایل اے بچیا چودھری کو گھر پر نظر بند کردیا گیا جس کے خلاف انہوں نے اپنے حامیوں کے ہمراہ، ان کے گھر کے سامنے دھرنا دے کر بیٹھ گئے۔ گنٹور میں ٹی ڈی پی قائدوسابق وزیر نکا آنندبابو کے مکان کے قریب حالات اس وقت کشیدہ ہوگئے جب پولیس نے ب ابو کو باہر نکلنے سے روکدیا اس موقع پر پولیس اور ٹی ڈی پی قائدین کے درمیان بحث وتکرار ہوئی۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.