مرکز، اے پی کو 1000 کروڑ کی عبوری امداد منظور کرے : چیف منسٹر جگن

چیف منسٹر نے وزیر اعظم نریندر مودی اور مرکزی وزیر داخلہ امیت شاہ کو مکتوبات روانہ کرتے ہوئے ریاست کو امداد فراہم کرنے پر زور دیا۔

امراوتی: آندھرا پردیش کے چیف منسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی نے مرکز سے ریاست کیلئے1000کروڑ روپے کی عبوری امداد منظور کرنے کا مطالبہ کیا اور سیلاب سے متاثرہ اضلاع میں نقصانات کا تخمینہ لگانے کیلئے مرکزی انٹر، منسٹریل ٹیم روانہ کرنے پر بھی زور دیا۔

چیف منسٹر نے وزیر اعظم نریندر مودی اور مرکزی وزیر داخلہ امیت شاہ کو مکتوبات روانہ کرتے ہوئے ریاست کو امداد فراہم کرنے پر زور دیا۔

انہوں نے مرکز سے خواہش کی کہ وہ بحران کے اس وقت ریاست کی مدد کیلئے آگے آئے اور متاثرہ خاندانوں کو فوری اثر کے ساتھ مدد فراہم کرے۔ سیلاب سے تباہ انفراسٹرکچر کی مرمت کے ذریعہ بنیادی سہولتوں کو بحال کرنے میں ریاست کی مدد کرنا چاہئے۔

چیف منسٹر نے وزیر اعظم سے خواہش کی کہ وہ بارش سے تباہی اور اس سے ہونے والے نقصانات کا تخمینہ لگانے کیلئے وزارتی ٹیم ریاست کو روانہ کرے۔ انہوں نے اپنے مکتوب میں تذکرہ کیا کہ کھڑی فصلیں تباہ ہوگئیں اور انفرااسٹرکچر کو بھی شدید نقصان پہنچا۔

نقصانات کا جملہ تخمینہ6054.79 کروڑ روپے لگایا گیا ہے۔ چیف منسٹر نے تحریر کیا کہ خلیج بنگال میں ہوا کے کم دباؤ کے زیر اثر ریاست کے جنوبی مقامات میں 13 تا20 نومبر شدید سے انتہائی شدید بارش ہوئی۔

اس عرصہ کے دوران4 ساحلی اور رائلسیما کے4 اضلاع میں 11.1 سنٹی میٹر بارش ہوئی جو نارمل 3.2 سنٹی میٹر سے 255 فیصد زیادہ ہے۔ جگن نے مزید بتایا کہ شدید بارش سے ٹمپل ٹاؤن، تروپتی، تروملا، نیلور ٹاؤن، مدنا پلی، راجم پیٹ، ٹاؤن ؤغیرہ کے نشیبی علاقے پانی سے محصور ہوگئے اور اس بارش سے عام زندگی شدید طورپر درہم برہم رہی۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.