تلنگانہ میں تمام اقامتی تعلیمی اداروں کو کھولنے ہائی کورٹ کی اجازت

ریاستی حکومت نے دو دن قبل عبوری درخواست داخل کرتے ہوئے عدالت العالیہ سے اقامتی تعلیمی اداروں کو کھولنے کی اجازت دینے کی خواہش کی تھی اور ان اداروں کی کشادگی پر عائد حکم التواء برخاست کرنے کی اپیل کی تھی۔

حیدرآباد: تلنگانہ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس ستیش چندرا شرما کی زیر قیادت بنچ نے حکومت کو ریاست بھر میں اقامتی تعلیمی، اداروں کو کھولنے کی اجازت دے دی ہے۔

ریاستی حکومت نے دو دن قبل عبوری درخواست داخل کرتے ہوئے عدالت العالیہ سے اقامتی تعلیمی اداروں کو کھولنے کی اجازت دینے کی خواہش کی تھی اور ان اداروں کی کشادگی پر عائد حکم التواء برخاست کرنے کی اپیل کی تھی۔

حکومت نے عدالت سے کہا تھا کہ ریاست میں اب جبکہ کورونا کی صورتحال مکمل طور پر قابو میں ہے اور دیگر تمام تعلیمی ادارے کام کررہے ہیں اس لئے حکومت نے عدالت سے اقامتی تعلیمی اداروں (اسکولس اور کالجس) کو کھولنے کیلئے قبل ازیں جاری کردہ حکم التواء برخاست کرنے کی اپیل کی تھی۔

ایڈوکیٹ جنرل پرساد نے عدالت کو بتایا کہ ریاست بھر میں تعلیمی ادارے کووڈ پروٹول کے تحت کام کررہے ہیں اور تمام تعلیمی اداروں میں حکومت کی جانب سے حد درجہ احتیاطی تدابیر اختیار کی جارہی ہیں۔ جس کے بعد ہائی کورٹ نے اپنے سابقہ احکام میں ترمیم کرتے ہوئے حکومت کو ریاست بھر کے تمام اقامتی تعلیمی اداروں کو کھولنے کی اجازت دے دی ہے۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.