حضورآباد میں انتخابی مہم کا اختتام،30 اکتوبر کو رائے دہی

تین بڑی جماعتوں ٹی آر ایس،بی جے پی اورکانگریس نے اس ضمنی الیکشن کواپنے وقار کامسئلہ بنالیاہے۔

حیدرآباد: حلقہ اسمبلی حضورآباد کے ضمنی الیکشن کی تیزتنداورجارحانہ مہم آج شام اختتام کوپہونچی۔ حلقہ کے رائے دہندے، 30۔ اکتوبر کو انتخابی میدان میں موجود30 امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ کریں گے۔

تین بڑی جماعتوں ٹی آر ایس،بی جے پی اورکانگریس نے اس ضمنی الیکشن کواپنے وقار کامسئلہ بنالیاہے۔ کووڈ قواعد کے مطابق الیکشن کمیشن نے رائے دہی سے جو30۔ اکتوبرکومقررہے،72 گھنٹے قبل انتخابی مہم کوختم کرنے کاحکم دیاتھا۔

اگرچیکہ انتخابی میدان میں 30امیدوارموجود ہیں تاہم ٹی آرایس امیدوارجی سرینواس یادو، بی جے پی امیدوارایٹالہ راجندر اورکانگریس امیدواربالموری وینکٹ میں اہم مقابلہ دیکھاجارہاہے۔ ووٹوں کی گنتی2۔نومبر کوکی جائے گی۔

حکمراں جماعت کے سربراہ چیف منسٹر کے چندرشیکھرراؤ، حضورآبادکے ضمنی الیکشن کولے کر کافی سنجیدہ ہیں۔ اس نشست پر ٹی آرایس کے قبضہ کوبرقراررکھنے کے لئے کے سی آرنے 3ہزارکروڑمالیت کے مختلف اسکیمات کااعلان کیاہے ان میں 2ہزارکروڑ مالیتی باوقاردلت بندھو اسکیم بھی شامل ہے۔

کے سی آر، کسی وقت ٹی آر ایس میں دوسرے اہم قائد کاموقف رکھنے والے‘ حکمراں جماعت سے20برسوں تک وابستہ اورعلحدہ تلنگانہ کے سرگرم مجاہدایٹالہ راجندرکوکسی بھی صورت میں شکست سے دوچارکرناچاہتے ہیں۔ حکمراں جماعت، دوباک حلقہ کے ضمنی الیکشن اورجی ایچ ایم سی انتخابات کی تاریخ ہرگز دہرانانہیں چاہتی۔

حضورآباد کے ضمنی الیکشن کو2023 کے اسمبلی انتخابات کاریفرنڈم قراردیاجارہاہے۔ ٹی آر ایس قائدین کوامیدہے کہ ترقیاتی کاموں کے نام پر ان کا امیدوار ضرورکامیاب ہوگا۔ دوسری طرف الیکشن کمیشن نے حلقہ میں ضمنی الیکشن کے پرامن وآزادانہ انعقاد کیلئے تمام ترانتظامات کئے ہیں۔ حضورآباد حلقہ میں 30۔ اکتوبرکوووٹ ڈالے جائیں گے۔

حلقہ کے رائے دہندے صبح7 بجے سے شام کے7بجے تک حق رائے دہی سے استفادہ کرپائیں گے۔ کوروناوبا اورسماجی دوری کی وجہ سے رائے دہی کے وقت میں دو گھنٹوں کااضافہ کیاگیا۔ عموماً5بجے شام تک ووٹ ڈالے جاتے ہیں۔ حلقہ میں 305 مراکز رائے دہی قائم کئے گئے ہیں۔ ہربوتھ پرپینے کاپانی، ٹینٹ، معذورین کیلئے خصوصی رامپس کانظم کیاجائے گا۔

میڈیکل اسٹاف کومتعین کیاگیا اورسنیٹائزرس کی دستیابی کے بھی انتظامات کئے جائیں گے۔ ضلع کلکٹر کریم نگر، کرنن اورآرڈی اورویندر ریڈی نے رائے دہی کے انتظامات کاجائزہ لیا۔ حلقہ میں ووٹرسلپس کی تقسیم، حلقہ میں غیرموجود(غیرحاضر)‘ منتقل ہوچکے اورمتوفی رائے دہندوں کا سروے تیزی کے ساتھ جاری ہے۔

کووڈ رہنمایانہ خطوط اورسخت سکیورٹی کے درمیان رائے دہی منعقدہوگی۔ رائے دہندے، صبح7بجے سے شام7بجے تک متعلقہ بوتھ پر پہنچ کر حق رائے دہی سے استفادہ کرسکتے ہیں۔ حکومت نے حلقہ میں 30۔ اکتوبرکوعام تعطیل کااعلان کیاہے۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.