عوام، کووڈ کی بوسٹر خوراک لینے کیلئے تیار رہیں، ڈاکٹروں کا مشورہ

امریکہ جیسے ترقی یافتہ ممالک میں کورونا وائرس کی نئی شکل کے انفیکشن سے محفوظ رہنے کیلئے بوسٹر خوراک دینے کی راہ ہموار کی جارہی ہے۔

حیدرآباد: ڈاکٹروں کے مطابق، عوام بالخصوص ایسے افراد کو جنہیں ملک میں کووڈ19 انفیکشن کا خطرہ ہے، کو وڈ۔19 ویکسین کی ایک بوسٹر خوراک لینے کیلئے ذہنی طور پر تیار رہنا چاہئے تاکہ خود کو کووڈ کے نئے ویرینٹ سے محفوظ رکھ سکیں اور اس سے وائرس کے خلاف مکمل جنگ میں مدد مل سکے۔

ہندوستان میں بالغ افراد کو صدفیصد ٹیکہ اندازی مہم صحیح سمت میں جاری ہے جبکہ امریکہ جیسے ترقی یافتہ ممالک میں کورونا وائرس کی نئی شکل کے انفیکشن سے محفوظ رہنے کیلئے بوسٹر خوراک دینے کی راہ ہموار کی جارہی ہے۔ نئے ویرینٹ، ایک بڑے خطرہ کے طور پر ابھر نے کا اندیشہ ہے۔ اس سے بچاؤ کیلئے امریکہ میں بوسٹر خوراک دینے کی تیاریاں جار ی ہیں۔

ڈاکٹروں کا ماننا ہے کہ وائرس کی نئی اقسام ہوسکتی ہیں اور یہ اقسام سماج میں پھیل رہی ہوں گی۔ کمزور قوت مدافعت کے افراد کو وائرس کے خلاف میں بچاؤ بوسٹر خوراک لینے کیلئے تیار رہنا چاہئے۔مختلف مطالعات کے مطابق وائرس کے خلاف ویکسی نیشن سے قوت مدافعت کو فروغ دیا گیا ہے جو گذرتے وقت کے ساتھ کم بھی ہوسکتی ہے۔

نوجوان اور صحت مند زمرہ کی آبادی کوو ائرس کے انفیکشن کا خطرہ کم رہے گا تاہم ایسے افراد کو جو انتہائی خطرہ کے زمرہ میں ہیں، انفیکشن سے نمٹنے کیلئے تیار ی کرنی ہوگی۔ ہندوستان میں ایک بڑی تعداد6ماہ قبل ویکسین کی دوسری خوراک لے چکی ہے۔ ان افراد میں اینٹی باڈیز کی سطح کے بارے میں پتہ لگانے پر غور کرنا ہوگا۔

ٹیکہ بنانے والی کسی بھی کمپنی نے اس بات کا تیقن نہیں دیا ہے کہ ویکسین لینے سے وائرس کے انفیکشن سے صدفیصد بچاؤ ممکن ہے۔ مغربی ممالک کی طرح ہندوستانیوں کو بھی اضافی بوسٹر خوراک لینے کیلئے تیار رہنا ضروری رہے گا۔ گلینیگلس گلوبل ہاسپٹل کے چیف انٹرونیشنل کارڈیولوجسٹ ڈاکٹر ایم سائی سدھاکر نے یہ بات بتائی۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.