مزید 4 منڈلوں میں دلت بندھو اسکیم نافذ، کے سی آرکا فیصلہ

حلقہ اسمبلی حضور آباد میں پہلے ہی پائلٹ پراجکٹ کے طور پر اس نئی اختراعی اسکیم کو روبعمل لایا جارہا ہے۔

حیدرآباد: چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے حلقہ اسمبلی حضور آباد کے ساتھ ریاست کے4محفوظ ایس سی حلقہ جات اسمبلی کے4 منڈلوں میں دلت بندھو اسکیم کو نافذ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

حلقہ اسمبلی حضور آباد میں پہلے ہی پائلٹ پراجکٹ کے طور پر اس نئی اختراعی اسکیم کو روبعمل لایا جارہا ہے۔

چیف منسٹر نے دلت بندھو اسکیم پر عمل آوری کیلئے جن 4منڈلوں کو منتخب کیا ہے ان میں ضلع کھمم کے حلقہ اسمبلی مدھیرا کا منڈل چنتا کانی، ضلع سوریا پیٹ کے حلقہ اسمبلی تنگاترتی کا منڈل ترمل گیری، ضلع ناگر کرنول کے حلقہ اسمبلی اچم پیٹ کا منڈل چارہ گنڈا اور ضلع کا ماریڈی کے حلقہ اسمبلی جکل کا نظام ساگر منڈل شامل ہے۔

یہ چار منڈلس، حلقہ اسمبل حضور آباد کے علاوہ ہیں جہاں دلت بندھو اسکیم کو موثر طور پر نافذ کیا جائے گا۔ ان چار منڈلوں کو ریاست کے چاروں سمت شمال، جنوب، مشرق و مغرب سے منتخب کیا گیا۔

یہاں یہ تذکرہ بیجانہ ہوگا کہ حکومت تلنگانہ نے دلتوں کی ہمہ جہت ترقی اور ان کی بہبود کیلئے دلت بندھواسکیم پر عمل آوری کا فیصلہ کیا ہے۔

پائلٹ پراجکٹ کے تحت حضور آباد حلقہ میں اس اسکیم کو متعارف کرایا گیا۔ چیف منسٹر نے اب حضور آباد کے علاوہ ریاست کے4محفوظ ایس سی حلقہ جات اسمبلی کے4منڈلوں میں بھی اس اسکیم کو رائج کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ان چاروں حلقہ اسمبلی سے دلت ایم ایل ایز نمائندگی کرتے ہیں اس لئے ان حلقوں کے منڈلوں کو منتخب کیا گیا ہے۔ چیف منسٹر نے حضور آباد اسمبلی حلقہ کے ساتھ ان 4منڈلوں کے دلتوں پر زور دیا ہے کہ وہ دلت بندھو اسکیم سے بہتر طور پر استفادہ کریں۔ حکومت ان منڈلوں میں فوری اثر کے ساتھ اس اسکیم کو نافذ کررہی ہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.