نائیجیریا گینگس کی جانب سے سرمایہ کاری کے نام پر دھوکہ

نائیجیریا کے شہریوں کی ٹولی بھاری منافع دینے کی لالچ دیتی ہے اورسرمایہ کاری پر مجبور کرتی ہے۔

حیدرآباد: نائیجیریا گینگس شہریوں کو آن لائن بٹ کوائن Bit-Coin ٹریڈینگ کے نام پر لوٹنے کی سرگرمیوں میں ملوث ہیں۔

سائبرکرائم پولیس نے عوام کو مشورہ دیا کہ وہ ان ٹولیوں کے جال میں نہ پھنسے۔ گذشتہ ایک ہفتہ میں 3 واقعات شہر میں پیش آئے ہیں جس میں دھوکہ بازوں کی جانب سے 60 لاکھ روپیوں کا دھوکہ دیا گیا ہے۔

اس ٹولی نے واٹس ایپ گروپس کے ذریعہ متاثرین سے راست رابطہ کرتے ہوئے شروع کے 44+ نمبر سے سرمایہ کاری کے نام پر Crypto کرنسی بزنس کے نام پر دھوکہ دیا جارہا ہے۔

دھوکہ بازوں کی جانب سے چند موبائیل نمبرات حاصل کرتے ہوئے واٹس ایپ پر نمبرات مانیٹر کرتے ہوئے پیامات روانہ کئے جارہے ہیں اور بھولے بھالے عوام کو بھروسہ دلاکرBitcoin ٹریڈنگ بزنس کے نام پر دھوکہ دیاجارہا ہے۔

اے سی پی سائبر کرائم کے وائی ایم پرساد نے یہ انکشاف کیا ہے۔ پولیس حکام کے بموجب چند افراد کی جانب سے سرمایہ کاری کرنے کا ارادہ کرنے کے بعددھوکہ بازوں کی جانب سے راست Chat پر بات چیت کی جاتی ہے۔

نائیجیریا کے شہریوں کی ٹولی بھاری منافع دینے کی لالچ دیتی ہے اورسرمایہ کاری پر مجبور کرتی ہے۔ اے سی پی نے یہ بات بتائی۔ ابھی تک سائبرکرائم پولیس میں تین افراد نے شکایت درج کروائی۔ منصوبہ بند گینگ دہلی سے چلائی جارہی ہے۔ سائبر کرائم پولیس نے بتایاکہ 8 لاکھ سے 43 لاکھ روپیوں کا دھوکہ دیا گیا ہے۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.