تلنگانہ تحریک: کے سی آر کے مرن برت کے 12 سال مکمل

ہی قومی سطح پر سیاسی جماعتوں کی توجہ اس مسئلہ کی جانب پہنچی اور دباو بڑھنے پر 9 ڈسمبر 2009 ء کو رات دیر گئے اُس وقت کے وزیرداخلہ پی چدمبرم نے اعلان کیاکہ مرکزی حکومت تشکیل تلنگانہ کا روڈ میاپ تیار کررہی ہے۔

حیدرآباد: تلنگانہ کوریاست کا درجہ دلانے کے لئے چلائی گئی تحریک میں اہم رول اداکرنے والے صدرٹی آرایس چندرشیکھرراو کے مرن برت کے 12سال آج مکمل ہوگئے ہیں،ان کی اس مرن برت نے چھ دہائیوں کے تلنگانہ ریاست کے خواب کو پوراکرنے میں اہم درجہ حاصل کیاتھا۔ چندرشیکھر راو نے حصول تلنگانہ کے لئے آج ہی کے دن ”مرن برت“ شروع کرنے کا اعلان کیا اور 29 نومبر 2009 ء کووہ مرن برت کا آغاز کرنے کریم نگر سے سدی پیٹ روانہ ہوئے تاہم پولیس نے ان کو کریم نگر کے الگنور کے پاس گرفتار کرتے ہوئے انھیں کھمم کی جیل منتقل کردیا۔14 دن تک عدالتی تحویل میں دینے کے بعد چندرشیکھرراو نے جیل میں ہی مرن برت شروع کردیا جہاں ان کی طبیعت خراب ہوئی۔

بعد ازاں ان کو کھمم کے اسپتال لے جایاگیا او رپھروہاں سے بعد ازاں ان کو حیدرآباد کے نمس منتقل کردیا گیا تھا لیکن وہ اپنا مرن برت جاری رکھے تھے۔اس مرن برت کے آغاز کے ساتھ ہی قومی سطح پر سیاسی جماعتوں کی توجہ اس مسئلہ کی جانب پہنچی اور دباو بڑھنے پر 9 ڈسمبر 2009 ء کو رات دیر گئے اُس وقت کے وزیرداخلہ پی چدمبرم نے اعلان کیاکہ مرکزی حکومت تشکیل تلنگانہ کا روڈ میاپ تیار کررہی ہے۔اس اعلان کے فوری بعد آندھرا ئی رہنماوں نے مرکز کے طریقہ کار پر اعتراض کرتے ہوئے اجتماعی استعفوں کے ذریعہ سیاسی بحران پیدا کرنے کی کوشش کی اور آندھرا ئی علاقوں میں احتجاج کا آغاز ہوا۔

اس صورتحال کو دیکھتے ہوئے مرکزی حکومت نے 23 ڈسمبر کو بیان سے دستبرداری اختیار کرلی جس کے نتیجہ میں تلنگانہ علاقوں میں احتجاج کا سلسلہ شروع ہوگیا اور دوسرے ہی دن تلنگانہ کے لیڈروں نے سیاسی وابستگیوں سے بالاتر ہوتے ہوئے تلنگانہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی کی تشکیل کا اعلان کیا تاکہ مرکز پر دباو ڈالا جاسکے اور لامتناہی احتجاج کا سلسلہ شروع ہوا اور ان احتجاجیوں پر قابو پانے کے لئے مرکزی حکومت نے 3 فروری 2010 ء کو 5 ارکان پر مشتمل سری کرشنا کمیٹی کی تشکیل کا اعلان کیا چناں چہ طویل تحریک اور جد و جہد کے بعد 7 فروری 2014 کو یو پی اے حکومت نے قیام ریاست کا بل منظور کیا، اس کے بعد 17 فروری کو لوک سبھا اور 20 فروری کو راجیہ سبھا نے بھی بل منظور کیاگیا، اس بل کے ذریعہ تلنگانہ کو ریاست کا درجہ دیاگیا۔آج وزیراعلی کے مرن برت کے 12 مکمل ہوگئے جس پر تلنگانہ کی حکمران جماعت ٹی آرایس کی جانب سے مختلف تقاریب کا اہتمام کیا جا رہا ہے۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.