تلنگانہ میں بی جے پی کسان مورچہ کا دھرنا

بی جے پی کسان مورچہ کی قیادت میں تلنگانہ بھر میں جمعرات کے روز تمام اضلاع مستقر پر کلکٹریٹس کے سامنے دھرنے منظم کئے گئے ہیں۔ ان احتجاجیوں نے مانسون سیزن میں کسانوں سے دھان اور دیگر اجناس خرید نے کا ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا ہے۔

حیدرآباد: حلقہ اسمبلی حضور آباد کے ضمنی الیکشن کے نتائج کے بعد جس میں بی جے پی امیدوار ای راجندر نے کامیابی حاصل کی تھی۔ حکمراں جماعت ٹی آر ایس اور اپوزیشن بی جے پی کے درمیان روز بروز لفظی جنگ میں شدت آرہی ہے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے بی جے پی پر تنقید کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ مرکز، تلنگانہ کے کسانوں پر دھان خرید نے میں تعاو نہیں کررہا ہے جبکہ ریاستی بی جے پی نے ٹی آر ایس حکومت سے دھان خرید نے کا مطالبہ کرتے ہوئے ریاست بھر میں آج کلکٹریٹس کے سامنے دھرنے منظم کئے ہیں۔

بی جے پی کسان مورچہ کی قیادت میں تلنگانہ بھر میں جمعرات کے روز تمام اضلاع مستقر پر کلکٹریٹس کے سامنے دھرنے منظم کئے گئے ہیں۔ ان احتجاجیوں نے مانسون سیزن میں کسانوں سے دھان اور دیگر اجناس خرید نے کا ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا ہے۔ احتجاجی، ٹی آ رایس حکومت کے خلاف نعرے لگا رہے تھے۔

 بی جے پی قائدین نے الزام عائد کیا کہ ریاستی حکومت، کسانوں کو ہراساں کررہی ہے۔ مرکزی حکومت، کسانوں سے اجناس خریدنے کیلئے تیار ہے مگر اس کیلئے ٹی آ رایس حکومت کو انتظامات کرنا چاہئے۔ ریاستی حکومت جب تک کسانوں سے دھان کے بشمول دیگر غذائی اجناس نہیں خرید تی تب تک بی جے پی کا احتجاج جاری رہے گا۔ تمام ضلع کلکٹریٹس کے قریب پولیس کا سخت بندوبست کیا گیا تھا۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.