تمام محکموں میں اردو کے چلن کو عام کرنے کا مطالبہ

اسمبلی میں آج وقفہ صفر کے دوران پاشاہ قادری نے اس مسئلہ کو اٹھاتے ہوئے کہا کہ اردو کے بحیثیت دوسری سرکاری زبان چلن کو عام کرنے کیلئے اقدامات صفر ہیں، سرکاری محکموں میں اردو میں درخواستیں قبول کرنے ان کا جواب اردو میں دینے کیلئے اسٹاف نہیں ہے۔

حیدرآباد: مجلس کے رکن اسمبلی سید احمد پاشاہ قادری نے کہا کہ حکومت تلنگانہ نے ریاست میں اردو کو دوسری سرکاری زبان کا درجہ ضروردیا ہے مگر اس پر عمل آوری ندارد ہے۔

اسمبلی میں آج وقفہ صفر کے دوران پاشاہ قادری نے اس مسئلہ کو اٹھاتے ہوئے کہا کہ اردو کے بحیثیت دوسری سرکاری زبان چلن کو عام کرنے کیلئے اقدامات صفر ہیں، سرکاری محکموں میں اردو میں درخواستیں قبول کرنے ان کا جواب اردو میں دینے کیلئے اسٹاف نہیں ہے۔

چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے اردو کو دوسری سرکاری زبان کا موقف دینے کا اعلان کیا ہے اور انہوں نے 66 اردو آفیسرس کا تقرر بھی کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ان کا احساس ہے کہ اردو کی مزید ترقی و ترویج ہونی چاہئے تھی۔ اسکولوں اور کالجوں میں طلبہ کو اختیاری مضمون کے طور پر اردو کو منتخب کرنا چاہئے تھا مگر ایسا نہیں ہوا۔ انہوں نے تمام سرکاری محکموں میں اردو کے چلن کو عام کرنے کا مطالبہ کیا۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.