ریونت اوربنڈی سنجے کیخلاف غداری کاکیس درج کرائیں گے: کے ٹی آر

تلنگانہ بھون میں میڈیا کے نمائندوں سے غیر رسمی بات چیت کرتے ہوئے کے ٹی آر نے کہا کہ وہ اپنے خون کامعائنہ کرانے کے لئے تیار ہیں۔ اپوزیشن قائدین‘کے سی آر کی عمر کا بھی لحاظ نہیں رکھ رہے ہیں من گھڑت الزامات عائد کررہے ہیں۔

حیدرآباد: حکمراں جماعت ٹی آر ایس کے کارگذار صدر کے تارک راماراؤ نے آج کہاکہ صدر پردیش کانگریس اے ریونت ریڈی اور صدر ریاستی بی جے پی بنڈی سنجے اگر اپنارویہ تبدیل نہیں کریں گے توان کی پارٹی ان دونوں قائدین کیخلاف غداری کا کیس درج کرائے گی۔

ریونت ریڈی اور بنڈی سنجے پر سخت تنقید کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ یہ دونوں اپوزیشن قائدین‘ چیف منسٹر کے سی آر کیخلاف من گھڑت الزامات عائد کررہے ہیں اور مجھے ڈرگس اسکینڈل میں گھسیٹ رہے ہیں مجھے ڈرگس کا برانڈایمبسیڈر کہہ رہے ہیں۔

 تلنگانہ بھون میں میڈیا کے نمائندوں سے غیر رسمی بات چیت کرتے ہوئے کے ٹی آر نے کہا کہ وہ اپنے خون کامعائنہ کرانے کے لئے تیار ہیں۔ اپوزیشن قائدین‘کے سی آر کی عمر کا بھی لحاظ نہیں رکھ رہے ہیں من گھڑت الزامات عائد کررہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ریونت ریڈی اوربنڈی سنجے کومرکزی وزیر نارائن رانے کی طرح سبق سکھایاجائے گا۔

چیف منسٹر ادھوٹھاکرے کیخلاف غیر معقول ریمار کس پرمرکزی وزیر رانے کوگرفتار کیاگیا تھا۔ انہوں نے کہاکہ حکومت کی جانب سے عوام کیلئے کئی فلاحی اسکیمات کا آغاز کیا گیا۔ ان اسکیمات پر موثر طریقہ پرعمل آوری کی جارہی ہے۔ انہوں نے سوال کیا کہ بی جے پی قائد بنڈی سنجے کیوں تلنگانہ میں پدیاترا کررہے ہیں۔

تلنگانہ کے قیام کے بعد کسانوں کی معاشی حالت مستحکم ہوئی ہے۔ ملک کی دیگر ریاستوں کے بہ نسبت تلنگانہ میں کسانوں کی خودکشی کے واقعات انتہائی کم ہیں۔ انہوں نے سوال کیا کہ ریونت ریڈی جوپیشہ سے پینٹر تھے‘ اب ان کے پاس جوبلی ہلز میں 4 مکانات‘4 دفاتر کہاں سے آئے ہیں؟ انہوں نے اے آئی سی سی قائد ما نیکم ٹیگورپر پردیش کانگریس کاعہدہ دلانے کے لئے ریونت ریڈی سے 50کروڑ روپے رشوت لینے کا الزام عائد کیا ہے۔

کے ٹی آر نے کہا کہ تلنگانہ میں تقریباً 2 ہزار کروڑ کی سرمایہ کاری ہوئی ہے۔انہوں نے کہاکہ حضورآباد کے مجوزہ ضمنی انتخابات میں کانگریس کی ضمانت ضبط ہوجائے گی۔ٹی آرایس کاامیدوار جی سرینواس یادو شاندار کامیابی حاصل کرے گا۔ اس حلقہ کے عوام باشعور ہیں۔وہ ٹی آرایس کوووٹ دے کر کامیاب بنائیں گے۔

انہوں نے وائی ایس آرتلنگانہ پارٹی اور بہوجن سماج پارٹی کے قائدین پر تنقید کرتے ہوئے کہاکہ صرف ریاستی حکومت پرتنقید کرنے کوان دونوں نے اپنا مقصد بنالیا ہے۔ ان کا مقصدٹی آرایس کے ووٹ کاٹنا اور بی جے پی کوفائدہ پہونچانا ہے۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.