شہر میں ٹریفک چالانات میں ہر روز اضافہ: جعفر حسین

ایسا لگتا ہے کہ یہ کانسٹبل، پولیس مین نہیں بلکہ فوٹو گرافر بن گئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ چالان کی عدم ادائیگی پر پولیس، بائیکس اور 4 پہیہ والی گاڑیاں چھین رہی ہیں۔ انسپکٹر گاڑیوں کو ضبط کررہے ہیں۔

حیدرآباد: مجلس کے رکن جعفر حسین نے آج اسمبلی میں وقفہ صفر کے دوران ٹریفک پولیس چالانات کا مسئلہ اٹھایا اور کہا کہ ایم ایل ایز کو ہر روز یہ شکایتیں مل رہی ہیں کہ ٹریفک پولیس چالانات میں یومیہ اضافہ ہورہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹریفک پولیس ٹریفک کو کنٹرول کرنے کا کام نہیں کررہی ہے بلکہ ایک کانسٹبل سڑک کے بازو چھپ کر تصاویر لیتا ہے۔ روزآنہ کیمرہ کلک کرنا اس کی ڈیوٹی ہوگئی۔

 ایسا لگتا ہے کہ یہ کانسٹبل، پولیس مین نہیں بلکہ فوٹو گرافر بن گئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ چالان کی عدم ادائیگی پر پولیس، بائیکس اور 4پہیہ والی گاڑیاں چھین رہی ہیں۔ انسپکٹر گاڑیوں کو ضبط کررہے ہیں۔ انہیں گاڑی سواروں کی پریشانی سے کوئی فکر نہیں ہے کہ کوئی ہاسپٹل تو کوئی امتحانی مرکز جارہا ہے۔ صرف گاڑیاں ضبط کرنا ان کا کام ہوگیا ہے۔ افراد خاندان کو اتار کر گاڑیاں ضبط کی جارہی ہیں۔

 انہوں نے ہراسانی کے اس طریقہ کو ختم  کرنے کا مطالبہ کیا۔کیونکہ پہلے ہی عوام کو کورونا وائرس کی وبا سے مالی پریشانیوں کا سامنا ہے۔ جعفر حسین نے چالان کی رقم کو50فیصد گھٹا تے ہوئے ون ٹائم سٹلمنٹ کا موقع فراہم کرنے کا مطالبہ کیا۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.