کریپٹو کرنسی میں بھاری نقصان پر ایک شخص کی خودکشی

ابتداء میں اُس نے 10لاکھ روپے انوسٹ کئے تھے۔ اچھا منافع ملنے کے بعد اُس نے سرمایہ کاری کی شرح میں اضافہ کردیا تھا مگر پھر اسے اچانک بھاری نقصان اٹھانا پڑا۔

حیدرآباد: کریپٹو کرنسی میں بھاری رقم گنوانے کے بعد تلنگانہ کے ایک شخص نے سوریا پیٹ ٹاؤن میں مبینہ طور پر خودکشی کرلی۔ پولیس نے بتایا کہ کھمم کا متوطن 36 سالہ جی رام لنگا سوامی نے سوریا پیٹ ٹاؤن میں ایک لاج میں مبینہ طور پر زہر پی کر خودکشی کرلی۔

پولیس نے لاج کے مالک کی شکایت کے بعد کل رات دیر گئے، لاج کے کمرہ سے لنگا سوامی کی نعش برآمد کرلی۔ لاج کے مالک نے اپنی شکایت میں کہا کہ ایک کمرہ میں مقیم شخص، متعدد بار دستک دینے کے باوجود ردعمل کا اظہار نہیں کررہا ہے۔

بعدازاں پولیس نے کمرہ سے نعش برآمد کرلی اور اسکو پوسٹ مارٹم کیلئے ہاسپٹل منتقل کردیا۔ پولیس کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ اس شخص نے منگل کو انتہائی قدم اٹھایا ہوگا۔ پولیس نے ایک چٹ بھی برآمد کرلی جو اُس نے اپنی بیوی کے نام تحریر کیا تھا۔

خاندان کے افراد کے مطابق اس شخص کے ساتھ اس کے دونوں ساتھیوں نے آن لائن ٹریڈنگ کے کریپٹو کرنسی کے ایپ کے ذریعہ سرمایہ کاری کی تھی۔ ابتداء میں اُس نے 10لاکھ روپے انوسٹ کئے تھے۔ اچھا منافع ملنے کے بعد اُس نے سرمایہ کاری کی شرح میں اضافہ کردیا تھا مگر پھر اسے اچانک بھاری نقصان اٹھانا پڑا۔

بتایا جاتا ہے کہ اُس نے70لاکھ روپے کی سرمایہ کاری کی تھی۔ ان میں بیشتر رقم قرض سے حاصل کی ہوئی تھی۔ بتایا جاتا ہے کہ جن افراد نے راما لنگا سوامی کو قرض دیا تھا، انہوں نے قرض واپسی کیلئے اس پر دباؤ ڈالنا شروع کردیا تھا اور ان لوگوں نے اس کی کار بھی چھین لی تھی اور چیک پر اُس کے دستخط کرالئے تھے۔

بھاری رقم سے ہاتھ دھوبیٹھنے اور قرض داروں کی ہراسانی سے دلبرداشتہ رام لنگا سوامی،22 نومبر کو سوریا پیٹ چلا گیا تھا اور وہ، وہاں ایک لاج میں مقیم تھا۔

یواین آئی کے مطابق مرکزی کی بی جے پی حکومت نے کہا کہ ہندوستان میں ڈیجیٹل کرنسی کے ریگولیشن اور پرائیویٹ ورچول کرنسی پرپابندی لگانے کے مقصد سے پارلیمنٹ کے سرمائی سیشن میں ایک بل پیش کیا جائے گا۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.