حیدرآباد میں کمسن کی عصمت ریزی و قتل

شبہ کیا جارہا ہے کہ عصمت ریزی کے بعد کمسن لڑکی کا قتل کردیا گیا ہے۔ پولیس جب مقام واقعہ پہنچی تب عوام نے سخت احتجاج کرتے ہوئے ملزم کو ان کے حوالے کرنے کا مطالبہ کیا۔

حیدرآباد: شہر کے سعید آباد علاقہ کی سنگارینی کالونی میں آج اس وقت کشیدگی پھیل گئی جبکہ ایک6 سالہ کمسن لڑکی کی عصمت ریزی اور قتل کی واردات پیش آئی۔

اس واردات کے بعد برہم عوام نے شدید احتجاج کیا جس کے بعد یہاں حالات کشیدہ ہوگئے۔ لڑکی، جمعرات کی شام 5 بجے سے لاپتہ تھی جس کی نعش، نصف شب بعد پڑوسی کے گھر سے دستیاب ہوئی۔

شبہ کیا جارہا ہے کہ عصمت ریزی کے بعد کمسن لڑکی کا قتل کردیا گیا ہے۔ پولیس جب مقام واقعہ پہنچی تب عوام نے سخت احتجاج کرتے ہوئے ملزم کو ان کے حوالے کرنے کا مطالبہ کیا۔

احتجاجی، پوسٹ مارٹم کیلئے نعش کو منتقل کرنے میں رکاوٹ بن رہے تھے۔ احتجاجیوں کا کہنا تھا کہ جب تک ملزم کو ان کے حوالے نہیں کیا جاتا تب تک وہ نعش کو پوسٹ مارٹم کیلئے یہاں سے لے جانے نہیں دیں گے۔

چند احتجاجیوں نے پولیس پر پتھراؤ بھی کیا اور مرچ پاؤڈر بھی پھینکے۔ پولیس نے بتایا کہ راجو، جس کے گھر سے لڑکی کی نعش دستیاب ہوئی ہے، فرار ہے۔ مفرور اس ملزم کو پکڑنے کی ممکنہ کوشش جاری ہے۔

اس واقعہ کے بعد علاقہ میں حالات کشیدہ ہوگئے۔ نظم وضبط کو برقرار رکھنے کیلئے زائد پولیس فورس کو روانہ کردیا گیا ہے۔

سنگارینی کالونی کے افراد نے چمپا پیٹ۔ ساگر روڈ پر دھرنا منظم کیا اور خاطی ملزم کو کیفر کردار تک پہنچانے اور متاثرہ کے ساتھ انصاف کا مطالبہ کیا۔

ضلع کلکٹر حیدرآباد ایل شرما جواحتجاجیوں کے غصہ کو ٹھنڈا کرنے کی کوشش کررہے تھے، نے متاثرہ خاندان کو فوری طور پر50ہزار روپے کی امداد کا اعلان کیا۔ بتایا جاتا ہے کہ لڑکی کے والدین، نلگنڈہ سے یہاں منتقل ہوئے تھے۔ کمسن کے والد آٹو رکشہ ڈرائیور بتائے گئے ہیں۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.