کرناٹک میں ریلوے پٹری پر نوجوان کی سر کٹی نعش دستیاب

مقتول نوجوان کی سر کٹی ہوئی اور مسخ نعش 28 ستمبر کو ریلوے پٹریوں پردستیاب ہوئی۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ اور تحقیقات میں انکشاف ہوا ہے کہ نوجوان کا قتل کیا گیا ہے۔

بنگلورو: کرناٹک میں ایک 25 سالہ نوجوان کا دوسرے مذہب سے تعلق رکھنے والی لڑکی کے ساتھ تعلق رکھنے پر مبینہ طور پر قتل کردیا گیا ہے۔ پولیس ذرائع نے آج یہ اطلاع دی۔

مقتول نوجوان کی سر کٹی ہوئی اور مسخ نعش 28 ستمبر کو ریلوے پٹریوں پردستیاب ہوئی۔

پوسٹ مارٹم رپورٹ اور تحقیقات میں انکشاف ہوا ہے کہ نوجوان کا قتل کیا گیا ہے۔ پولیس کو شبہ ہے کہ اس کیس کی دائیں بازو کی ایک تنظیم ملوث ہے۔ مقتول کی شناخت ارباز ملا ساکن اعظم نگر ضلع بلگاوی کی حیثیت سے کی گئی ہے جو 27 ستمبر سے لاپتہ تھا۔

نوجوان کی نعش ضلع کے خان پورہ تعلقہ میں 28 ستمبر کو ریلوے پٹریوں پر پائی گئی۔ مقتول کی ماں نے ایک شکایت درج کرواتے ہوئے الزام عائد کیا کہ ان کے بیٹے کا قتل دائیں بازو کی تنظیم کے ارکان کی جانب سے کیا گیا ہے۔

متعلقہ

ایک پولیس افسر نے بتایا ”ارباز کاایک دوسری برادری سے تعلق رکھنے والی ایک لڑکی سے تعلق تھا اور اس کی ماں کے مطابق اسے مبینہ طور پر پہلے بھی دھمکایا گیا تھا اور ایک مقامی کارکن نے جان بخشنے کیلئے جبری طور پر رقم وصول کرنے کی کوشش کی تھی“۔

ابتداء میں ریلوے پولیس نے اس کیس کو اپنے ہاتھ میں لے کر قتل کا ایک مقدمہ درج کیا تھا لیکن بعد میں اس نے یہ کیس ڈسٹرکٹ پولیس کے حوالہ کردیا۔

ابتدائی تحقیقات میں پتہ چلا کہ ارباز کو بعض افراد نے طلب کیا تھا اور قتل سے پہلے ایک لڑائی ہوئی تھی اور بعد میں اس کی نعش ریلوے پٹریوں پر پھینک دی گئی۔ پولیس ذرائع نے بتایا کہ لڑکی کے ارکان خاندان کو پوچھ تاچھ کیلئے حراست میں لیا گیا ہے۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.