فٹبال، فارمولا ون اور رگبی کی ٹیموں کے مالکین کی بھی آئی پی ایل میں دلچسپی

ہندوستانی لیگ اب کرکٹ کے علاوہ فٹبال، فارمولا ون اور رگبی جیسے کھیلوں میں سرمایہ کاری کرنے والے اداروں کو بھی اپنی جانب راغب کرنے لگی ہے۔

ممبئی: آئی پی ایل کو دنیا بھر میں ہونے والی لیگز میں سب سے مہنگی لیگ ہونے کا اعزاز حاصل ہے۔ آئی پی ایل دنیا بھر کے شائقین کرکٹ کو اپنی جانب راغب کئے ہوئے ہے۔

تاہم یہ ہندوستانی لیگ اب کرکٹ کے علاوہ فٹبال‘ فارمولا ون اور رگبی جیسے کھیلوں میں سرمایہ کاری کرنے والے اداروں کو بھی اپنی جانب راغب کرنے لگی ہے۔

ایک ٹاپ یوروپی فٹبال کلب اور ایک وینچر کیاپٹل گروپ جو یوروپ میں رگبی لیگ کا مالک ہے اور اس سے پہلے فارمولا ون چلا رہا تھا اور اوڈیشہ میں قائم ایک صنعتی گھر جو اسٹیل، بجلی اور کوئلہ پیدا کرتا ہے، انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) کی نئی ٹیموں میں شامل ہونا چاہتے ہیں۔

واضح رہے کہ انویٹیشن ٹو ٹنڈر (آئی ٹی ٹی) کی فروخت کی آخری تاریخ آج ختم ہوچکی ہے۔ کریک بز کی اطلاع کے مطابق کچھ نئے ادارے آئی پی ایل فرنچائزز کیلئے بولی لگانے قطار میں شامل ہوچکے ہیں جس کی فروخت 25 اکتوبر کو دبئی میں کی جائے گی۔

اطلاعات کے مطابق تقریباً 20 ادارے ITT دستاویز خرید چکے ہیں۔ اس بات کی کوئی گارنٹی نہیں ہے کہ تمام خریدار دبئی میں بولی لگائیں گے لیکن کچھ نئے ادارے جن کے نام سامنے آئے ہیں، ٹیم کی نیلامی میں شامل ہوں گے۔

نیلامی میں ٹیم کی بنیادی قیمت 2000 کروڑ روپے مقرر کی گئی ہے۔ تاہم بولی میں حصہ لینے والے ادارو ں کی دلچسپی کو دیکھتے ہوئے ماہرین کا اندازہ ہے کہ نئی فرنچائز بنیادی قیمت سے کہیں زیادہ قیمت میں فروخت ہوں گی۔ سی وی سی وینچر کیاپٹل ایک امریکی پرائیویٹ ایکویٹی ہاؤس فارمولا ون میں حصص رکھتاہے جوکہ دنیا کے امیر ترین کھیلوں میں سے ایک ہے۔

عالمی پرائیویٹ ایکویٹی فرم نے حال ہی میں یوروپ میں سکس نیشنز رگبی ٹورنامنٹ میں 14.3 فیصد حصص کیلئے 509 ملین امریکی ڈالر خرچ کیے ہیں۔ CVC نے نیوزی لینڈ رگبی میں سرمایہ کاری کرنے کی بھی کوشش کی تھی۔ اب یہ آئی پی ایل ٹیم خریدنے کیلئے تیار ہے۔

ایک اور نامعلوم خواہش مند نوین جندل جو لوک سبھا کے سابق رکن اور جندل اسٹیل اینڈ پاور کے موجودہ چیرمین ہیں، کوئلے کے شعبہ میں بھی کاروباری مفادات رکھتے ہیں۔ خیال کیا جاتاہے کہ وہ کٹک، اڑیسہ میں فرنچائز رکھنے کے آپشن پر غور کررہے ہیں۔

جہاں اس کے گروپ نے صنعتیں قائم کی ہیں۔ یوروپ کا ایک مشہور فٹبال کلب بھی دلچسپی رکھتاہے، بورڈ آف کنٹرول فار کرکٹ ان انڈیا (بی سی سی آئی) کے ایک عہدیدار نے نام ظاہر کیے بغیر کہاکہ یہ پارٹیاں پہلے ہی دلچسپی رکھنے والے کاروباری گھروں جیسے اڈانی گروپ، سنجیو گوینکا، 2 بڑی دوا ساز کمپنیوں ٹورینٹ اور اوروبندو اور کوٹک گروپ میں شامل ہیں جو انشورنس، سیکیورٹیز اور بینکنگ سیکٹر کی کمپنیوں کے ساتھ ہیں۔

ذریعہ
ایجنسیز

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.