چیلنج کو قبول کرنا ہمیشہ اہم ہوتا ہے: روہت شرما

سلامی بلے باز نے کہاکہ ایک بار سبقت لینے کے بعد ہم صرف اپوزیشن ٹیم کے گیندبازو ں پر دباؤ بنانا چاہتے تھے۔ میں اننگز کی شروعات کی اہمیت جانتا ہوں۔ مجھے خوشی ہے کہ میں ٹیم کے لئے کچھ کرسکا۔

لندن: ہندستانی سلامی بلے باز روہت شرما نے انگلینڈ کے خلاف چوتھا ٹیسٹ میچ جیتنے کے بعد کہاکہ وہ جتنا ہوسکے اتنی دیرتک کریز پر رہنا چاہتے تھے آج اوول کے میدان پر سنچری ان کے لئے کافی خاص تھی دوسری اننگز میں 127رن بناکر پلیئر آف دی میچ بنے روہت نے کہاکہ ہم جانتے ہیں کہ دوسری اننگز کتنی اہم ہوتی ہے۔ وراٹ نے بلے بازوں اور پوری ٹیم کی طرف سے جس کوشش کا ذکر کیا وہ بہت اہم تھا۔

 غیرملکی زمین پر یہ میری پہلی سنچری تھی۔ میں اس پر بہت خوش ہوں کہ میں ٹیم کو ایک مضبوط حالت میں لے جاسکا۔ میرے دماغ میں سنچری نہیں تھی، ہم بلے بازی پر دباو سے واقف تھے، اس لئے ہم نے صبر رکھا اور حالات کے حساب سے بلے بازی کی۔

سلامی بلے باز نے کہاکہ ایک بار سبقت لینے کے بعد ہم صرف اپوزیشن ٹیم کے گیندبازو ں پر دباؤ بنانا چاہتے تھے۔ میں اننگز کی شروعات کی اہمیت جانتا ہوں۔ مجھے خوشی ہے کہ میں ٹیم کے لئے کچھ کرسکا۔

 چیلنج کو قبول کرنا ہمیشہ اہم ہوتا ہے، آگے یہ آسان نہیں ہونے والا ہے۔ ڈرہم میں ہمارے پاس اپنی تربیت اور تکنیک کو دکھانے کیلئے وقت تھا اور عالمی ٹیسٹ چیمپئن شپ فائنل کے بعد ہمارے پاس 20-25دن تھے، جو سچ مچ ایک گیم چینجر ہے۔ فی الحال میری چوٹ ٹھیک ہے۔ فزیو نے کہاہے کہ چوٹ کا ہرمنٹ جائزہ لینا ہے۔

(یواین آئی)

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.