غزہ پٹی میں حماس کے ٹھکانوں پر اسرائیلی فوج کی کاروائی

مغربی کنارہ میں اسرائیلی فوجیوں کے ساتھ جھڑپوں کے دوران 174 فلسطینی زخمی ہوگئے جبکہ احتجاجی اسرائیلی جیلوں میں قید فلسطینیوں کی تائید کا مظاہرہ کررہے تھے۔

تل ابیب/ رملہ : اسرائیل حفاطتی دستوں (آئی ڈی ایف) نے جوابی کارروائی میں غز ہ پٹی میں حماس اسلامک تحریک کے ٹھکانوں پر حملہ کیا ہے۔

آئی ڈی ایف کے مطابق جمعہ کی دیر رات اسرائیل میں غزہ پٹی سے ایک راکٹ داغا گیا تھا، لیکن آئرن ڈوم ایریل ڈیفنس سسٹم نے اسے روک دیا۔

آئی ڈی ایف نے اپنے ٹوئٹر پیج پر لکھا ”آج رات اسرائیل پر غزہ سے داغے گئے راکٹ کے جواب میں ہم نے حماس کے ٹھکانوں پر حملہ کیا“۔

مغربی کنارہ میں اسرائیلی فوجیوں کے ساتھ جھڑپوں کے دوران 174 فلسطینی زخمی ہوگئے جبکہ احتجاجی اسرائیلی جیلوں میں قید فلسطینیوں کی تائید کا مظاہرہ کررہے تھے۔ سرکاری عہدیداروں نے آج یہ بات بتائی۔

ایک بیان میں فلسطین کی ہلال احمر سوسائٹی نے بتایا کہ 25 زخمیوں میں سے جو ربر کی گولیوں سے زخمی ہوئے تھے ان کے علاوہ ایک ایمبولنس ڈرائیور اور فوٹو جرنلسٹ بھی جمعہ کو ہوئے جھڑپوں میں زخمی ہوئے۔ ژنہوا نیوز ایجنسی رپورٹ میں یہ بات بتائی۔

ہزاروں فلسطینیوں نے ان 6 فلسطینی قیدیوں کے ساتھ اظہار یگانگت کے لیے ایک روزہ یوم برہمی کے مظاہرے میں شرکت کی تھی جبکہ فلسطینی قیدی اس ہفتہ کے اوائل اسرائیل کی جیل سے فرار ہوگئے تھے۔

احتجاجی فوجی پوائنٹس اور سڑکوں پر کھڑی رکاوٹوں تک پہنچ گئے جہاں ان کا اسرائیلی فوجیوں سے تصادم ہوا۔

عینی شاہدین نے بتایا کہ احتجاجیوں نے اسرائیلی فوجیوں پر سنگباری کی اور جواب میں اسرائیلی فوجیوں نے ان کو منتشر کرنے کے لیے آشک آور گیس اور ربر کی گولیاں کااستعمال کیا۔

اسرائیل اور فلسطینیوں کے درمیان شمالی اسرائیل میں ایک سرنگ کے ذریعہ فلسطینی قیدیوں کے فرار کے بعد سے کشیدگی میں اضافہ ہوتا رہاہے۔

ذریعہ
یو این آئی۔ آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.