ابھینندن نے ہمارا ایف 16 طیارہ نہیں مار گرایا: پاکستان

پاکستانی دفتر خارجہ نے اپنے بیان میں کہا کہ پاکستان واضح طورپر ہندوستان کے دعویٰ کو بے بنیاد قرار دے کر مسترد کرتا ہے کہ ہندوستانی پائلٹ نے پاکستانی ایف 16 طیارہ مارگرایا تھا۔

اسلام آباد: پاکستان نے منگل کے دن ہندوستان کے اس موقف کو ”بے بنیاد“ قراردے کر مسترد کردیا کہ فروری 2019 میں ایک ہندوستانی پائلٹ نے پاکستانی ایف 16طیارہ کو مارگرایا تھا۔ وِنگ کمانڈر ابھینندن ورتمان (اب گروپ کیپٹن) نے 27  فروری 2019کو اپنے مِگ 21 بائسن لڑاکا طیارہ سے پاکستانی ایف 16 لڑاکا طیارہ کو مارگرایا تھا۔

اسے پاکستانی فوج نے پکڑلیا تھا اور یکم مارچ کی رات اس کی رہائی عمل میں آئی تھی۔ اسے پیر کے دن ہندوستان نے ویرچکرا ایوارڈ عطا کیا۔ ویر چکرا (پرم ویر چکرا اور مہاویر چکرا) کے بعد تیسرا بڑا ایوارڈ ہے جو جنگ کے دوران بہادری دکھانے پر دیا جاتا ہے۔ پاکستانی دفتر خارجہ نے اپنے بیان میں کہا کہ پاکستان واضح طورپر ہندوستان کے دعویٰ کو بے بنیاد قرار دے کر مسترد کرتا ہے کہ ہندوستانی پائلٹ نے پاکستانی ایف 16 طیارہ مارگرایا تھا۔

بین الاقوامی ماہرین اور امریکی عہدیدار پہلے ہی توثیق کرچکے ہیں کہ اُس دن کوئی پاکستانی ایف 16 طیارہ نہیں مارگرایا گیا۔ انہوں نے پاکستان کے پاس موجود ایف 16 طیارہ کی گنتی کے بعد یہ توثیق کی تھی۔پائلٹ کی رہائی اس بات کا ثبوت ہے کہ پاکستان‘ ہندوستان کی جارحیت کے باوجود اس کے ساتھ امن کی خواہش رکھتا ہے۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.