وزیراعظم عمران خان اور وزیر دفاع میں بحث و تکرار

پرویز خٹک نے کہا کہ وہ عمران خان کو ووٹ نہیں دیں گے۔ انہوں نے شکایت کی کہ حکومت‘ شمال مغربی صوبہ خیبر پختونخواہ سے لاپرواہی برت رہی ہے۔ جمعرات کے دن برسراقتدار محاذ کے پارلیمانی پارٹی اجلاس کے دوران یہ واقعہ پیش آیا۔

اسلام آباد: وزیراعظم پاکستان عمران خان اور وزیر دفاع پرویز خٹک میں تلخ کلامی ہوئی۔

پرویز خٹک نے کہا کہ وہ عمران خان کو ووٹ نہیں دیں گے۔ انہوں نے شکایت کی کہ حکومت‘ شمال مغربی صوبہ خیبر پختونخواہ سے لاپرواہی برت رہی ہے۔ جمعرات کے دن برسراقتدار محاذ کے پارلیمانی پارٹی اجلاس کے دوران یہ واقعہ پیش آیا۔

وزیراعظم کی صدارت میں پارلیمنٹ ہاؤز میں یہ اجلاس منعقد ہوا تھا۔ اخبار ڈان نے یہ اطلاع دی۔

متنازعہ ضمنی فینانس بل 2022 کی منظوری کے لئے طلب کردہ اجلاس میں وزیر دفاع نے کہا کہ کم ترقی یافتہ صوبہ کے عوام کو نئے گیس کنکشن نہیں گئے تو وہ وزیراعظم کو ووٹ نہیں دیں گے۔

پرویز خٹک‘ صوبہ خیبر پختونخواہ کے نوشیرہ 1سے قومی اسمبلی (پاکستانی پارلیمنٹ) کے لئے منتخب ہوئے تھے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ پرویز خٹک کی شکایتوں پر وزیراعظم غصہ میں آگئے اور انہوں نے ان سے کہاکہ وہ انہیں ”بلیک میل“ کرنا بند کردیں۔ اس پر وزیر دفاع‘ میٹنگ ہال سے چلے گئے لیکن بعد میں وزیراعظم نے انہیں واپس بلالیا۔

میٹنگ کے بعد وزیراعظم‘ لگ بھگ سارا دن اپنے چیمبر میں بیٹھے رہے جہاں انہوں نے اپنی پارٹی پاکستان تحریک ِ انصاف (پی ٹی آئی) اور برسراقتدار محاذ میں شامل دیگر جماعتوں کے کئی ارکان پارلیمنٹ سے ملاقات کی۔

ذرائع کے بموجب پرویز خٹک کا کہنا تھا کہ برقی اور گیس کے معاملہ میں ان کے صوبہ کو نظرانداز کیا جارہا ہے جبکہ دیگر صوبوں کے عوام کو یہ سہولت میسر ہے۔

وزیر دفاع نے وزیراعظم سے کہا کہ صورتِ حال ایسی ہی رہی تو ان کے صوبہ کے عوام‘ پی ٹی آئی کو ووٹ نہیں دیں گے تاہم میٹنگ کے بعد پرویز خٹک نے میڈیا سے کہا کہ انہوں نے وزیراعظم سے نہ تو سخت لب و لہجہ میں بات کی اور نہ ووٹ نہ دینے کی کوئی دھمکی دی۔

انہوں نے صرف گیس کی قلت اور نئے گیس کنکشن پر امتناع کا مسئلہ اٹھایا۔ انہوں نے کہا کہ وہ اسموکر ہیں اور سگریٹ پینے کے لئے ہال سے باہر گئے تھے۔ پارلیمانی پارٹی اجلاس کے بعد وزیراعظم نے وزیر دفاع کو پھر اپنے چیمبر میں بلایا اور ان کے رویہ پر پھر ناراضگی ظاہر کی۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.