پاکستان کے صوبہ بلوچستان میں طاقتور زلزلہ‘ 22 افراد ہلاک

کم ازکم 22 افراد ہلاک اور زائداز 300 زخمی ہوگئے۔ عہدیداروں نے یہ بات بتائی۔ جیو نیوز کی اطلاع کے مطابق ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے عہدیداروں نے بتایا کہ مہلوکین کی تعداد میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

کراچی: پاکستان کے صوبہ بلوچستان کو آج صبح 5.9 شدت کے ایک طاقتور زلزلہ نے دہلادیا جس کے نتیجہ میں کئی مکانات منہدم ہوگئے۔

کم ازکم 22 افراد ہلاک اور زائداز 300 زخمی ہوگئے۔ عہدیداروں نے یہ بات بتائی۔ جیو نیوز کی اطلاع کے مطابق ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے عہدیداروں نے بتایا کہ مہلوکین کی تعداد میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

اسلام آباد میں قائم نیشنل سیسمک مانیٹرنگ سنٹر نے اطلاع دی ہے کہ زلزلہ کا مبدا ہرنئی کے قریب تقریباً 15کیلو میٹر کی گہرائی میں تھا۔ اس نے مزید کہا کہ مکمل نقصان کاہنوز پتہ نہیں چلا ہے۔

زلزلہ کی وجہ سے کوئٹہ‘ سیبی‘ ہرنئی‘ پشن‘ قلعہ سیف اللہ‘ چمن‘ زیارت اور زوہوب علاقے متاثر ہوئے ہیں۔ بیشتر اموات دوردراز واقع شمال مشرقی ضلع ہرنئی میں ہوئی ہیں۔ امریکی جیولوجیکل سروے نے کہا ہے کہ زلزلہ کی شدت 5.9 تھی۔

ہرنئی کے ڈپٹی کمشنر سہیل انور ہاشمی نے 22 اموات کی توثیق کی ہے۔ مہلوکین میں 6 بچے بھی شامل ہیں۔ صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھاریٹی (پی ڈی ایم اے)کے مطابق مہلوکین میں کئی خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔ مابعد جھٹکے ہنوز محسوس کئے جارہے ہیں۔ سب سے پہلے صبح 3:20 بجے جھٹکے محسوس کئے گئے تھے اور شہری دہشت زدہ ہوکر قرآنی آیات کا ورد کرتے ہوئے گھروں سے باہر نکل آئے تھے۔ راحت اور بچاؤ کارروائیاں جاری ہیں۔

تمام ہاسپٹلس میں ایمرجنسی کا اعلان کردیا گیا ہے۔ ہاشمی کے مطابق کئی افراد کو نازک حالت میں ہاسپٹل منتقل کیا گیا۔ انہوں نے بتایا کہ ہرنئی کی کئی عمارتوں کو نقصان پہنچا ہے۔ کئی افراد ملبہ میں دب گئے ہیں۔ مٹی سے بنے ہوئے 100 سے زائد مکان منہدم ہوچکے ہیں اور لوگ بے گھر ہوگئے ہیں۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.