کابل گردوارہ کے ہیڈگرنتھی سمیت دو افراد کا افغانستان سے تخلیہ

کابل میں واقع گردوارہ کرتے پروان کے ہیڈ گرنتھی کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے ہندوستانی شہری ست ویر سنگھ اور صوبہ خوست سے تعلق رکھنے والے افغان شہری سرجیت سنگھ کا آج تخلیہ کرایاگیا۔

نئی دہلی: جنگ زدہ ملک افغانستان سے سکھ برادری کے دو ارکان کا تخلیہ کرایاگیا ہے۔ انڈیاورلڈ فورم کے عہدیداروں نے آج یہ بات بتائی۔

کابل میں واقع گردوارہ کرتے پروان کے ہیڈ گرنتھی کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے ہندوستانی شہری ست ویر سنگھ اور صوبہ خوست سے تعلق رکھنے والے افغان شہری سرجیت سنگھ کا آج تخلیہ کرایاگیا۔

سرجیت سنگھ گردوارہ کے کیرٹیکر کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے تھے۔ حکومت ہند نے انڈیا ورلڈ فورم کے ساتھ اشتراک کرتے ہوئے تخلیہ کے اس عمل کو یقینی بنایا ہے۔

انڈیاورلڈ فورم نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ شری گرونانک دیو کی 552 ویں یوم پیدائش کے موقع پر انڈین ورلڈ فورم نے حکومت ہند کے ساتھ اشتراک اور سوبتی فاؤنڈیشن کی مدد سے آج دو افراد کا افغانستان سے تخلیہ کرایا ہے۔

دونوں افراد جمعہ کے روز خانگی ایرلائن کے ذریعہ نئی دہلی کے ایرپورٹ پہنچیں گے۔ یہ دونوں آج رات تہران میں قیام کریں گے۔ انڈین ورلڈ فورم کے صدر پنیت سنگھ چندوک نے بتایاکہ فی الحال ہندو اور سکھ برادری سے تعلق رکھنے والے 218 افغانی شہری حکومت ہند کی جانب سے ای ویزا کی اجرائی کے منتظر ہیں۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.